اربوں روپے کا فراڈ، ٹیکس چوری :چن ون گروپ کیخلاف نیب سرگرم


فیصل آباد(احمد یٰسین)اربوں روپے کا پراپرٹی فراڈ کرنیوالے معروف صنعتی گروپ چن ون کیخلاف قومی احتساب بیورو نے تحقیقات شروع کردی ہیں۔ چن ون کیخلاف ثبوت اکٹھے کئے جارہے ہیں ۔ اس کے مالکان کو بلایا جا رہا ہے اور کسی بھی وقت ان کی گرفتاری بھی متوقع ہے۔چن ون گروپ کے مالکان پر الزام ہے کہ انہوں نے اربوں روپے کا پراپرٹی فراڈ کیا ہے۔ لگژری اپارٹمنٹس فروخت بھی کردئیے جبکہ حقیقت میں اپارٹمنٹس کیلئے اراضی خریدی ‘ اس کی کسی مجاز اتھارٹی سے منظوری لی نہ ہی اپارٹمنٹس بنائے۔ نیوزلائن کے مطابق معروف صنعتی گروپ چناب لمیٹڈ کے ذیلی ادارے چن ون نے چند سال قبل ’’چن ون لگژری اپارٹمنٹس اینڈ ہومز ‘‘کے نام سے ایک پراجیکٹ شروع کیا۔چناب لمیٹڈ کے مالکان میں سے میاں محمد لطیف اس پراجیکٹ کے سی ای او بتائے جاتے رہے۔ مسلم لیگ ق کے سابق ایم این اے فرحان لطیف‘ پی ٹی آئی رہنما چوہدری اشفاق کے صاحبزادے کاشف اشفاق‘ میاں نعیم‘ عمیر نعیم اور معروف کنسلٹنٹ شاہنواز چن ون کے اس پراجیکٹ کے کرتا دھرتا بتائے جاتے رہے۔ ذرائع کے مطابق تحریک انصاف ویسٹ پنجاب کے سابق صدر اور ٹوبہ ٹیک سنگھ سے شکست خوردہ امیدوار چوہدری اشفاق بھی اس گروپ کے مالکان میں شامل ہیں۔اور اس پراپرٹی فراڈ میں بھی ان کا نام شامل رہا ہے۔ اس کے علاوہ کاشف اشفاق اس پراجیکٹ کیلئے پی ٹی آئی کا نام استعمال کرتا رہا اور ان کے فنکشن میں عمران خان بھی شامل ہوئے ۔ نیب ذرائع کے مطابق چن ون گروپ نے لاہور ‘ اسلام آباد اور فیصل آباد میں شروع کئے گئے اس پراجیکٹ کے نام پر اربوں روپے اکٹھے کئے جبکہ لاہور اور اسلام آباد میں اس کیلئے اراضی خریدی نہ ہی اپارٹمنٹس بنانے کیلئے کسی ادارے سے اجازت لی۔ بغیر اراضی خریدے اور مجاز اتھارٹی سے اجازت لئے بغیر ہی چن ون گروپ کے مالکان نے اپارٹمنٹس فروخت کردئیے۔ اربوں روپے اکٹھے کئے اور لوگوں کو کوئی اپارٹمنٹ یا گھر دئیے بغیر ہی غائب ہوگئے۔ لوگوں کو طویل عرصہ گزرنے کے باوجود اپارٹمنٹ اور گھر دئیے جارہے ہیں نہ ہی ان کی رقوم واپس کی گئی ہیں۔ مزید برآں چن ون اور چناب گروپ کے کروڑوں روپے کی ٹیکس چوری کی رپورٹس بھی سامنے آچکی ہیں۔ ایف بی آر ریکارڈ کے مطابق چن ون گروپ اور چناب گروپ کی کروڑوں روپے کی ٹیکس چوری پکڑی جا چکی ہے اور اس کے مالکان ٹیکس ادائیگی کی بجائے مسلسل تاخیری حربے استعمال کررہا ہے۔ ذرائع کے مطابق نیب نے اس معاملے کی تحقیقات شروع کردی ہیں۔ چن ون کے متاثرہ شہریوں کو بلایا جارہا ہے۔ چن ون گروپ کے فراڈ بارے ثبوت اکٹھے کئے جارہے ہیں جبکہ اس پراجیکٹ کے مالکان کیخلاف قانون کا شکنجہ کسنا شروع کردیا گیا ہے۔ نیب ذرائع کے مطابق ثبوت مکمل کرتے ہی اس پراجیکٹ کے نام پر فراڈ کرنیوالوں کو گرفتار بھی کیا جا سکتا ہے۔

Related posts