جے آئی ٹی کو 40سال کا ریکارڈ دیدیا‘ایف بی آر میں ٹمپرنگ نہیں ہوئی‘چیئرمین ایٖ بی آر

فیصل آباد(ندیم جاوید)فیڈرل بورڈ آف ریونیو کے چیئرمین ڈاکٹر ارشاد احمد نے کہا ہے کہ پاناما کی تحقیقات کرنے والی جے آئی ٹی کو اس کا مطلوبہ تمام ریکارڈ فراہم کر دیا ہے۔ ایف بی آر نے جے آئی ٹی سے کچھ بھی پوشیدہ نہیں رکھا ہم نے سپریم کورٹ کے احکامات پر عمل کیا ہے اور جے آئی ٹی کو چالیس سال کا ریکارڈ دیدیا ہے۔ مزید بھی جے آئی ٹی جو مانگے گی اسے فراہم کردیا جائے گا۔ ہم نے ایف بی آر کے ریکارڈ میں کوئی ٹمپرنگ نہیں کی اور نہ ہی ہم ایسے کوئی عزائم رکھتے ہیں۔فیصل آباد میں ایک تقریب کے دوران نیوزلائن سے گفتگو کرتے ہوئے چیئرمین ایٖ بی آر کا کہنا تھا کہ ایف بی آر کے معاملات کو شفاف بنانے کیلئے ہر ممکن اقدام اٹھایا جا رہا ہے۔ پانامہ کیس کی جے آئی ٹی کو ہر وہ ریکارڈ فراہم کر دیا گیا ہے جو انہوں نے طلب کیامزید بھر جو کہیں گے انہیں فراہم کر دیں گے۔ پانامہ کی تحقیقات کے حوالے سے ایف بی آر مکمل غیرجانبدار ہے اور غیر جانبدار رہے گا۔ٹیکسوں کی شفاف وصولی اور ٹیکس نیٹ میں اضافہ ہمارا ہدف ہے ۔ نان فائلر سے ٹیکس وصولی ایک بڑا مسئلہ بنا ہوا تھاہم نے نان فائلر کے ٹیکس میں اضافہ کر دیا ہے، اب ریٹرن فائل سے 100روپے ٹیکس ہو گا تو نان فائلر سے 200روپے ٹیکس وصول کیا جائے گا۔رواں مالی سال کے ہمارے ٹیکس اہداف مکمل ہو چکے ہیں اور کہیں بھی ہمیں شارٹ فال کا سامنا نہیں جو ہماری ٹیم کی جانفشانی کامنہ بولتا ثبوت ہے۔تقریب میں چیف کمشنر آر ٹی او فیصل آباد شاد محمد‘ سرگودھا اور گوجرانوالہ کے چیف کمشنرز‘ کلکٹر کسٹم فیصل آباد اور دیگر افسران نے بھی شرکت کی۔

جے آئی ٹی کو 40سال کا ریکارڈ دیدیا‘ایف بی آر میں ٹمپرنگ نہیں ہوئی‘چیئرمین ایٖ بی آر

Related posts