رانا ثناء اللہ 22قتل کر چکے : مزید کتنے بندے ماریں گے

rana-sanaullahمسلم لیگ ن کی قیادت بتائے کی رانا ثناء اللہ کو کتنے بندے مارنے کا لائسنس دیا گیا ہے۔رانا ثناء اللہ وزیر قانون نہیں بلکہ وزیر لاقانونیت ہیں۔وہ بائیس افراد کو قتل کر چکے ہیں اور مزید جانے کتنے قتل کریں گے۔اپنے حلقے میں انہوں نے تین بھائیوں سمیت بائیس افراد کو قتل کیا شہر بھر میں انہوں نے قتل و غارت گری شروع کر رکھی ہے۔وقت ثابت کرے گا کہ مشکل وقت آیا تو سب سے پہلے ثناء اللہ پارٹی کے خلاف ہو گا۔پنجاب کے وزیر قانون راناثناء اللہ کے خلاف یہ سب باتیں کسی اپوزیشن رہنما نے نہیں بلکہ میاں نواز شریف اور میاں شہباز شریف کے قریبی عزیز‘ مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما‘اور وزیر مملکت پانی و بجلی عابد شیر علی کے والدسابق ایم این اے و سابق میئر فیصل آباد چوہدری شیر علی نے ایک پریس کانفرنس کے دوران کیا۔ان کا کہنا تھا کہ رانا ثناء اللہ کبھی شریف برادران کے ساتھ وفا نہیں کریں گے۔ میاں شہباز شریف کے خلاف وعدہ معاف گواہ ثناء اللہ ہی بنے گا۔چیف سیکرٹری‘آر پی او‘ سی پی او‘ کمشنر‘ ڈی سی او سمیت تمام سرکاری افسران جانتے ہیں کہ ثناء اللہ قتل وغارت گری میں ملوث ہیں اور بائیس بندوں کو مار چکا ہے مگر اس کے باوجود قانون کی حکمرانی کے دعوے کرنے والی بیوروکریسی اس کے سامنے بھیگی بلی بنی ہوئی ہے اور یہاں آکر ان کاقانون جانے کیوں خاموش ہو جاتا ہے۔مسلم لیگ ن کے قائدین ہمیں بتائیں کہ کیوں رانا ثناء اللہ کو بندے مارنے کا لائسنس دیا ہوا ہے۔ ہمیں فیصل آباد میں یہ سب قبول نہیں ہے۔ رانا ثناء اللہ جس کا چہیتا وزیر ہے وہ اس کو اپنے پاس ہی لے جائے فیصل آباد کے عوام کی اس سے جان چھڑوا دیں۔

Related posts