زراداری کا وفاق میں پی ٹی آئی کی غیرمشروط حمائت کا فیصلہ


اسلام آباد(نیوزلائن) پی پی پی پی کے چیئرمین آصف علی زرداری نے فیصلہ کیا ہے کہ وفاق میں پی ٹی آئی کیخلاف کسی اتحاد اور پارلمینٹ سے باہر کسی احتجاج کا حصہ نہیں بنیں گے۔ اور وفاق میں پی ٹی آئی کو حکومت بنانے کا موقع دیا جائے گا۔ نیوزلائن کے مطابق پیپلزپارٹی نے سیاست کی ڈرٹی گیم میں شامل نہ ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔ انتخابی عمل پر تحفظات کے باوجود پی پی پی پی کے چیئرمین اآصف علی زرداری جلائو گھیرائو کی سیاست کرنے کے خواہاں نہیں ہیں۔ پی پی پی نے وفاق میں اپوزیشن میں بیٹھنے اور پی ٹی آئی کو وفاقی حکومت بنانے میں غیر مشروط حمائت دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ ذرائع کے مطابق پیپلزپارٹی نے آصف علی زرادری کی بجائے بلاول بھٹو کو پارلیمانی لیڈر بنانے کا فیصلہ کیا ہے اور پارلیمنٹ میں وہی پارٹی کو لیڈ کریں گے اور اپوزیشن کی سیاست کریں گے۔ ذرائع کے مطابق پی پی پی نے ایم ایم اے اور مسلم لیگ ن کو بھی ڈرٹی گیم سے دور رہنے اور پارلیمانی نظام کو چلانے میں مدد کرنے کا مشورہ دیا ہے۔ ایم ایم اے کو بھی کہا گیا ہے کہ وہ پارلیمنٹ میں آئے اور معاملات کو پارلیمنٹ میں حل کرے۔ شخصیات کی بجائے ایشوز کی سیاست کی جائے۔ الیکشن کمیشن کو غیرجانبدار اور مضبوط بنانے اور دیگر اداروں میں اصلاحات لانے کیلئے تمام سیاسی جماعتوں کیساتھ مل کر اقدامات کئے جائیں۔ وفاق میں پی ٹی آئی جبکہ صوبوں میں اکثریتی جماعتوں کو حکومت سازی کے متوازی مواقع فراہم کرنے کا بھی مطالبہ پی پی پی کی طرف سے کیا جائے گا۔ پنجاب میں بھی پی پی پی اکثریتی جماعت کو حکومت بنانے کا موقع فراہم کرنے کے حق میں ہے جبکہ پنجاب میں آزاد امیدواروں کی وفاداریاں خریدنے اور فارورڈ بلاک کی سیاست کے خلاف آواز بلند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

Related posts