صوبائی وزیر کے رشتہ دارکے ہاتھوں سرکاری فنڈز کی سرکاری افسران میں تقسیم


فیصل آباد(نیوزلائن)پنجاب حکومت نے سرکاری فنڈز کا استعمال کرکے سرکاری ملازمین کو سیاسی شخصیات کے رشتہ داروں کا بھی مرہون منت بنانا شروع کر دیا ہے۔ وزیر موصوف مصروف تھے تو سرکاری اداروں کے سرکاری افسران کو وزیر کے ایک رشتہ دارنے سیاسی ڈیرے پر اکٹھا کیا اور وزیر کے رشتہ دار جو کوئی عوامی یا سرکاری عہدہ نہیں رکھتے نے سرکاری خزانے سے جاری ہونے والے سرکاری فنڈز کے چیک سرکاری اداروں کے سرکاری افسران میں تقسیم کئے ۔ یہی نہیں ‘اس کی خبر بھی سرکاری محکمہ اطلاعات سے جاری کروائی گئی ۔پنجاب حکومت کے سرکاری محکمہ اطلاعات ’’ڈی جی پی آر‘‘ کے مقامی آفس سے جاری ہونے والی پریس ریلیز کے مطابق صوبائی وزیر قانون رانا ثناء اللہ خاں کے سمن آباد میں رابطہ آفس میں صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی پی 70کے سرکاری تعلیمی اداروں کے سربراہان اور ان کے نمائندوں کو اکٹھا کیا گیا اور ان میں عدم دستیاب سہولیات کیلئے چیک تقسیم کئے گئے۔سرکاری تعلیمی اداروں میں سہولیات کی فراہمی کیلئے سرکاری افسران میں سرکاری خزانے سے فراہم کردہ کروڑوں روپے کے اعلیٰ سرکاری افسر کے سائن کردہ چیک صوبائی وزیر کے کوئی سرکاری عہدہ نہ رکھنے والے رشتہ دار کے ہاتھوں تقسیم کئے گئے۔تقریب میں علاقے کی متعدد یونین کونسلز کے منتخب چیئرمین ‘ کونسلرز اور سرکاری افسران بھی موجود تھے مگر سرکاری فنڈز کے چیک سرکاری افسران کو تھمانے کی زحمت نہ کرسکے اور یہ سعادت ایک غیرسرکاری شخصیت نے حاصل کی۔صوبائی وزیر کے رشتہ دار نے سرکاری افسران میں سرکاری فنڈز کے چیک تقسیم کرنے کیساتھ ان سے خطاب بھی کیا اور انہیں مستقبل میں بھی سرکاری خزانے سے مزید فنڈز کی فراہمی کرنے کی یقین دہانی بھی کروائی ۔

Related posts