فورتھ شیڈول: ساڑھے پانچ ہزار افراد کے اکائونٹس منجمد

عرصہ دراز سے بھارت کی جانب سے عالمی سطح پر مولانا مسعود اظہر اور حافظ سعید کے ناموں پر واویلا مچا یا جارہا تھا۔جسے بین الاقوامی سطح پر کوئی خاص پذیرائی حاصل نہیں ہو رہی تھی۔سٹیٹ بینک آف پاکستان نے نیکٹا کی ہدایت پر مولانا مسعود اظہر سمیت 4 ہزار مشتبہ افراد کے بینک اکاؤنٹس منجمد کردیے۔ترجمان سٹیٹ بینک کے مطابق مولانا مسعود اظہر سمیت 4 ہزار سے زائد مشتبہ لوگوں کے بینک اکاؤنٹس منجمد کردیے گئے ہیں ۔ ان بینک اکاؤنٹس میں موجود 35 کروڑ روپے کی رقم منجمد کی گئی ہے ۔نجی ٹی وی جیو نیوز نے ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیا ہے کہ نیکٹا نے فورتھ شیڈول میں شامل 5 ہزار 500 لوگوں کی معلومات سٹیٹ بینک اور نادرا کے ساتھ شیئر کی تھیں جن میں کالعدم تنظیم جیش محمد کے سربراہ مولانا مسعود اظہر کا نام بھی شامل ہے۔ جن افراد کے اکاؤنٹس منجمد کیے گئے ان کے نام فورتھ شیڈول میں شامل ہیں

Related posts