فیصل آباد کی بلدیاتی سیاست میں بھونچال: شیر علی اور زاہد نذیر اکٹھے ہو گئے


sher-ali-zahid
فیصل آباد(نیوزلائن)فیصل آباد کی بلدیاتی سیاست میں بھونچال آگیا۔ آگ اور پانی مل بیٹھے۔چوہدری شیر علی اور چوہدری زاہد نذیر نے ضلع کونسل اور میئر فیصل آباد کا الیکشن مل کر لڑنے کا فیصلہ کر لیا۔نیوز لائن کے مطابق دونوں نے اتحاد کیا ہے صوبائی وزیر قانون رانا ثناء اللہ اورمشرف دور کے سپیکر پنجاب اسمبلی افضل ساہی کے مشترکہ گروپ کے خلاف۔رانا ثناء اللہ کا تعلق مسلم لیگ ن سے ہے تو زاہد نذیر کا تعلق بھی مسلم لیگ ن سے ہے اور ان کے بھائی عاصم نذیر مسلم لیگ ن کے رکن قومی اسمبلی ہیں۔چوہدری زاہد نذیر ضلعی ناظم رہ چکے ہیں‘ چیئرمین ضلع کونسل اور مسلم لیگ ن کے رکن صوبائی اسمبلی بھی رہے ہیں۔ان کے والد چوہدری نذیر بھی متعدد مرتبہ چیئرمین ضلع کونسل اور رکن قومی اسمبلی رہے ہیں۔دوسری جانب چوہدری شیر علی مسلم لیگ ن کے فیصل آباد میں بانی رکن ہیں متعدد مرتبہ فیصل آباد کے میئر بنے‘ رکن قومی اسمبلی اور رکن پنجاب اسمبلی بھی رہے۔ان کے صاحبزادے عامر شیر علی بھی میئر فیصل آباد رہ چکے ہیں۔ چوہدری شیر علی کی میاں نواز شریف اور میاں شہباز شریف سے قریبی قرابت داری اور دیرینہ مراسم ہیں۔ ان کے صاحبزادے عابد شیر علی اس وقت بھی مسلم لیگ ن کے رکن قومی اسمبلی اور وزیرمملکت برائے پانی و بجلی ہیں۔ فیصل آباد کی بلدیاتی سیاست میں دونوں فیملیز کا پرانا کردار اور تجربہ ہے۔ نذیر فیملی ضلع کی سیاست میں جبکہ شیر علی شہر کی سیاست میں منجھے ہوئے کھلاڑی سمجھے جاتے ہیں۔مگرماضی میں بلدیاتی سیاست میں دونوں فیملیز مقابل نہ ہونے کے باوجود حریف سمجھے جاتے رہے ہیں۔ مگر اب دونوں نے فیصلہ کیا ہے کہ آمدہ بلدیاتی الیکشن میں مل کر الیکشن میں حصہ لیا جائے۔ ضلع میں چوہدری شیر علی نے زاہد نذیر کی حمائت اور ووٹ ڈلوانے کا وعدہ کیا ہے تو میونسپل کارپوریشن میں چوہدری زاہد نذیر نے وعدہ کیا ہے کہ اپنے ووٹ چوہدری شیر علی کے میئر گروپ کو ڈلوائیں گے۔ذرائع کے مطابق دونوں رہنماؤں کی ملاقات بھی ہو چکی ہے اور ن لیگ کا ٹکٹ ملنے یا نہ ملنے دونوں صورتوں میں باہم مل کر الیکشن لڑنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔سیاسی ماہرین کے مطابق فیصل آباد کی بلدیاتی سیاست دونوں فیملیز کے گرد گھومتی ہے اور دونوں کا مل بیٹھنا آگ اور پانی کا ملاپ ہے۔ ان کے اکٹھے الیکشن میں حصہ لینے کی صورت میں کسی کا ان کے امیدواروں کے مقابل ٹھہرنا ممکن نہیں ہو گا۔

Related posts