مریم نواز نے جلاوطنی سے مشروط این آر او ویٹو کردیا


اسلام آباد(نیوزلائن) سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز نے کسی صورت پاکستان سے باہر نہ جانے کا فیصلہ کیا ہے اور میاں نواز شریف کے پاس این آر او کی آفر لینے والوں کو صاف جواب دیدیا ہے۔ سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف نے بھی مریم نواز کو فیصلے کا اختیار دیا جس نے اس آفر کو سرے سے مسترد کردیا اور آفر لانے والے اپنے فیملی اور بیرون فیملی ذرائع کو اس حوالے سے اسٹیبلشمنٹ کیساتھ ہر طرح کی بات چیت بند کرنے کی ہدائت کردی۔ نیوزلائن کے مطابق میاں نواز شریف کو این آر او کی آفر کی گئی تھی۔ آفر لانے والوں میں گورنر پنجاب رفیق رجوانہ اور گورنر سندھ محمد زبیر بھی شامل تھے۔ این آر او مشروط تھا جس میں میاں نواز شریف اور مریم نواز کو خاموشی اختیار کرکے بیرون ملک جانے کا کہا گیا تھا۔ ذرائع کے مطابق شریف فیملی کے متعدد افراد اس آفر کو قبول کرنے کے حق میں تھے۔ تاہم میاں نواز شریف نے اس آفر پر کوئی ردعمل دینے کی بجائے آفر کو مریم نواز کے سامنے رکھ دیا۔ ن لیگی ذرائع کے مطابق مریم نواز نے کسی خفیہ ڈیل سے صاف انکار کردیا جبکہ این آر او کو ویٹو کرتے ہوئے اس پر ہر قسم کی بات چیت بند کرنے کی ہدائت کردی۔ ذرائع کے مطابق آفر دینے والوں نے شریف فیملی کو مزید سوچنے کا وقت دیا ہے تاہم مریم نواز آفر لے کر آنیوالوں کو صاف انکار کرچکی ہیں اور اس پر کوئی بات کرنے پر آمادہ نہیں ہیں۔جبکہ میاں نواز شریف بھی مریم نواز کی رائے سے متفق ہیں۔

Related posts