13 اکتوبر دنیا کیلئے انتہائی خطرناک ترین دن

sun2سورج کی سطح پر ہمہ وقت زوردار دھماکے ہوتے رہتے ہیں جن کی وجہ سے شمسی طوفان اور سورج کی سطح کے شعلے تیزی کے ساتھ زمین کی طرف بڑھتے ہیں تاہم زمین تک پہنچنے سے پہلے ہی خلاءمیں تحلیل ہو جاتے ہیں۔ اب ماہرین نے اس حوالے سے ایک بڑے خطرے کا اعلان کر دیا ہے۔ سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ ”13اکتوبر ہماری زمین کے لیے خطرناک ترین دن ہے کیونکہ سورج کی سطح سے ایک خوفناک شمسی طوفان زمین کی طرف تیزی سے بڑھ رہا ہے اور ممکنہ طور پر تیرہ اکتوبر کویہ زمین کے مقناطیسی فیلڈ سے ٹکرائے گا۔“برطانوی اخبار ڈیلی سٹار کی رپورٹ کے مطابق سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ اس شمسی طوفان کا پہلا نشانہ خلاءمیں موجود ہمارے خلاءنورد ہوں گے۔ اس کے بعد یہ طوفان ہماری سیٹلائٹس اور پاور لائنز کو تباہ کر سکتا ہے جس سے ہمارے جدید معاشرے کے ختم ہونے کا خدشہ ہے کیونکہ اس سے ہماری جدید الیکٹرانک ڈیوائسز ناکارہ ہو جائیں گی۔ اس سے صرف وہی انسان متاثر ہوں گے جو اس وقت جہازوں میں یا خلائی سٹیشن پر زیادہ بلندی میں موجود ہوں گے۔ امریکی ادارے نیشنل اوشنک اینڈ ایٹماسفیرک ایڈمنسٹریشن نے بھی تصدیق کر دی ہے کہ یہ شمسی طوفان آئندہ ہفتے زمین کے مقناطیسی فیلڈ سے ٹکرائے گا۔

Related posts

Leave a Comment

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.