نیوورلڈآرڈر کی تشکیل: امریکہ کیلئے خطرہ‘ پاکستان کا کردار مرکزی

پاکستان کی موثر حکمت عملی اور پاک چائینہ دوستی کی بدولت دنیا میں معاشی و دفاعی تبدیلیاں آرہی ہیں۔مستقبل قریب میں ”نیو ورلڈ آرڈر“ تشکیل پا رہا ہے۔نیو ورلڈ آرڈر میں دنیا ”یونی پولرورلڈ“ سے نکل کر ایک مرتبہ پھر ”بائی پولر ورلڈ“ یا بڑی حد تک ”ٹرائی پولر ورلڈ“ کے عالمی منظر نامے میں پہنچ جانے کا ااحتمال ہے۔ نیو ورلڈ آرڈر کی تشکیل کیلئے ابتدائیہ لکھا جا چکا ہے۔ نئے عالمی آرڈر میں ایک جانب شمالی امریکہ کی ریاستوں کے اتحاد میں خلل پڑنے کا خدشہ موجود ہے…

Read More

جب بیٹیوں کا قتل جرم نہ رہا

یہ 1990 کا سال تھا۔ جنرل ضیا الحق کا شریعتی پودا مضبوط ہو کر تن آور درخت میں بدل رہا تھا۔پاکستان کی سپریم کورٹ کے اس وقت کے چیف جسٹس افضل ظلہ نےایک حکم جاری کیا جس کا ہر روز پاکستانی عدالتوں میں ذکر ہوتا ہے اور اس کے برے نتائج سامنے آنے کے باوجود کوئی اسے ٹھیک کرنے کے لیے تیار نہیں ہے کیونکہ اس کے ساتھ لفظ اسلام جڑ چکا ہے۔ جسٹس افضل ظلہ کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے بینچ نے حکم دیا کہ اگر حکومت نے…

Read More

کیا ٹی وی بھی آلہِ قتل ہے؟

کسی کو یاد ہے کہ بائیس برس پہلے روانڈا کے دارالحکومت کگالی کے قریب ایک طیارہ گر کر تباہ ہوا تھا؟ اس طیارے میں روانڈا کے ہوتو صدر ہبرے مانا بھی سوار تھے۔ آج تک معلوم نہیں ہو پایا کہ یہ حادثہ تھا یا طیارہ کسی میزائیل کا نشانہ بنا۔ مگر اس واقعے کے ایک گھنٹے کے اندر اندر اقلیتی تتسی قبیلے کا قتلِ عام شروع ہوگیا۔ کیونکہ سرکاری ریڈیو اور ایف ایم چینلز پر ہوتوؤں کی غیرت کو للکارا گیا کہ آج تتسیوں نے تمہارے صدر کو مار دیا…

Read More

پنجاب کے 95 لاکھ مزدورکا المیہ: خادم اعلیٰ ایک نظر ادھر بھی

پنجاب حکومت ملک میں ایک عام تاثر یہ دے رہی ہے کہ صوبے میں سب اچھا ہے اور پورا صوبہ ایک نظام کے تحت خودکار انداز میں چل رہا ہے۔ مگر افسوس یہ کہ اسی صوبے کے ایک کروڑ باسی اپنے بنیادی سماجی حق سے محروم ہیں مگر کوئی حکومتی عہدیدار اور خود ”خادم اعلیٰ“جناب محترم چیف منسٹر میاں شہباز شریف اس سماجی مسئلے کو حل کرکے صوبے کے عوام کا سب سے بڑا مسئلہ حل کرنے میں سنجیدہ نہیں ہیں۔پاکستان میں ایک عام آدمی کو صحت‘ تعلیم‘ لائف انشورنس‘…

Read More

گناہِ بے لذت

ایک خبر کے مطابق، حکومتِ پنجاب نے حکم دیا ہے کہ نوازشریف صاحب کی داستانِ حیات پر مبنی کتاب خریدی اور پھراسے پبلک لائبریریوں کی زینت بنایاجائے۔ظاہر ہے کہ سرکاری پیسے سے۔ اس خبر نے ذہن کے بہت سے دریچے وا کر دیے۔ مو لانا امین احسن اصلاحی مرحوم کی بے مثل تفسیر ”تدبرِ قرآن‘‘ مکمل ہوئی تو ممتاز صحافی اور کالم نگار عطاالرحمن صاحب ان کی خدمت میں حاضر ہوئے اوریہ تجویز پیش کی کہ تفسیرکی تشہیر اور پذیرائی کے لیے ایک تقریب منعقد کی جائے۔عطاالرحمن صاحب کے مو…

Read More