پانامہ لیکس: قطری شہزادے کا مریم نواز کے حق میں خط سپریم کورٹ میں جمع

سپریم کورٹ میں پاناما لیکس کیس کی سماعت کے دوران وزیراعظم نواز شریف کے بچوں کے وکیل اکرم شیخ نے جوابی دستا ویزات کے ساتھ قطر کے شہزادے حمد بن جا سم کے خط کی کاپی بھی جمع کرادی جس میں انہوں نے کہاکہ میرے والد کے شریف خاندان کے ساتھ کاروباری تعلقات تھے ۔سپریم کورٹ میں چیف جسٹس انور ظہیر جمالی کی سربراہی میں پانچ رکنی بینچ نے پاناما لیکس کیس کی سماعت کی ۔اس موقع پر مریم ،حسن اور حسین نواز کے وکیل اکرم شیخ نے جوابی دستا…

Read More

خواجہ سرا ہونا ہی جرم بن گیا

میں نہیں سمجھ پا رہی کہ میں کیا کہوں۔۔ میں واقعی بہت پریشان ہوں۔ یہ میرے لیے ایک صدمہ سے کم نہیں ہے۔ مجھے لگتا ہے میں ایک عجیب صورتحال میں ہوں جیسے ایک ناول ہو جس کوئی ہیرو نہ ہو اور سب ولن کا کردار نبھا رہے ہوں۔ یہ صرف میری حالت ہے جو کرائم سین سے کوسوں دور اپنے گھر میں بیٹھی بلاگ لکھ رہی ہوں۔ میں وہ خوف بیان کر رہی ہوں جو میں نے کچھ ویڈیوز دیکھنے کے بعد محسوس کیا۔ نیچے دی گئی ویڈیو میں…

Read More

عمران خان نے سچ کو خود ہی دفن کردیا‘ سپریم کورٹ

سپریم کورٹ : پاناما لیکس سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران جسٹس عظمت سعید نے تحریک انصاف کے وکیل حامد خان سے استفسار کیا کہ درخواست گزار نے سچ کو خود ہی دفن کردیا ہے، پی ٹی آئی کی دستاویزات میں اخباری تراشے بھی شامل ہیں، حالانکہ اخبارات کے تراشے کوئی ثبوت نہیں ہوتا، پی ٹی آئی کی ان دستاویزات کا کیس سے تعلق ہی نہیں، اخبارایک دن خبر ہوتا ہے اگلے روز اس میں پکوڑےفروخت ہوتےہیں۔ اگر اخبارمیں خبر آجائےکہ اللہ دتہ نےاللہ رکھا کو قتل کردیا ہےتو…

Read More

اخبارات کے تراشے کوئی ثبوت نہیں ہوتا,جسٹس عظمت سعید

سپریم کورٹ : پاناما لیکس سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران جسٹس عظمت سعید نے تحریک انصاف کے وکیل حامد خان سے استفسار کیا کہ درخواست گزار نے سچ کو خود ہی دفن کردیا ہے، پی ٹی آئی کی دستاویزات میں اخباری تراشے بھی شامل ہیں، حالانکہ اخبارات کے تراشے کوئی ثبوت نہیں ہوتا، پی ٹی آئی کی ان دستاویزات کا کیس سے تعلق ہی نہیں، اخبارایک دن خبر ہوتا ہے اگلے روز اس میں پکوڑےفروخت ہوتےہیں۔ اگر اخبارمیں خبر آجائےکہ اللہ دتہ نےاللہ رکھا کو قتل کردیا ہےتو…

Read More

کرپشن مقدمات کی سماعت کرنا سپریم کورٹ کا کام نہیں, چیف جسٹس

چیف جسٹس آف پاکستان جستس انور ظہیر جمالی نے پاناما لیکس سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران ریمارکس دیئے ہیں کہ سپریم کورٹ تفتیشی ادارہ نہیں ہے اور نا ہی بدعنوانی یا کرپشن مقدمات کی سماعت کرنا سپریم کورٹ کا کام ہے۔ چیف جسٹس انور ظہیر جمالی كی سربراہی میں جسٹس آصف سعید كھوسہ ،جسٹس امیر ہانی مسلم، جسٹس شیخ عظمت سعید اور جسٹس اعجاز الحسن پر مشتمل لارجر بینچ پاناما لیکس کیس کی سماعت كررہا ہے ، وزيراعظم كے بچوں حسین، حسن اور مریم نواز نے اپنا وكيل…

Read More