پاور سیکٹر پی ایس او کا 226 ارب روپے کا مقروض


کراچی(نیوزلائن)زیر گردش قرضے ایک بار پھر سراٹھانا شروع ہوگئے جس کے باعث پاکستان کی سب سے بڑی آئل مارکیٹنگ کمپنی پی ایس او کو شدید مالی مشکلات کا سامنا کرنا پڑھ رہا ہے ، نیوزلائن کے مطابق پی ایس او کو حبکو، کیپکو، جینکوزاور پی آئی اے سمیت دیگر اداروں سے 274 ارب روپے کی وصولیاں کرنی ہے صرف پاور سیکٹر ہی پی ایس او کا 226 ارب روپے کا مقرض ہے جس میں حبکو کو 62 ارب روپے، کیپکو 23 ارب روپے اور جینکوز 141 ارب روپے کی نادہندا ہیں ، با کمال لوگ لاجواب سروس کی دعویدار پی آئی اے نے پی ایس او کے 15 ارب روپے ادا نہیں کئے جس کے باعث پاکستان اسٹیٹ آئل قومی ائیرلائن کو جیٹ فیول کی متواتر فراہمی جاری نہ رکھنے کے حوالے سے انتظامیہ اور وزارت پیٹرولیم کو علیحدہ علیحدہ خطوط بھی ارسال کرچکی ہے۔ دوسری جانب پی ایس او کو کویت پیٹرولیم اور ایل این جی کی مد میں 63 ارب روپے کی ادائیگیاں کرنی ہیں ، تجزیہ کاروں کے مطابق اگر بجلی پیدا کرنے والی کمپیوں نے بروقت ادائیگیاں نہ کی تو پی ایس او کے لئے بلا تعطل فرنس آئل کی فراہمی میں مشکلات پیدا ہوسکتی ہے جس سے ملک میں لوڈ شیڈنگ میں اضافے کا خدشہ بڑھ جائے گا۔

Related posts