افضل بٹ نے دوسری مرتبہ پی ایف یو جے کو فتح کر لیا


اسلام آباد(نیوزلائن)کوئٹہ میں ہونے والے الیکشن میں اسلام آباد سے تعلق رکھنے والے صحافتی سیاست کے ماہر افضل بٹ نے دوسری مرتبہ پاکستان فیڈرل یونین آف جرنلسٹس میں فتح یابی حاصل کر لی۔سابق صدر پی ایف یو جے پرویز شوکت کیساتھ صحافتی و انتخابی اخلاقیات کے معاملے پر اختلاف کرنے کے بعد میدان میں آنے والے افضل بٹ نے خود خود بھی تمام صحافتی و اخلاقی اقدار کر پس پشت ڈال کر محض عددی اکثریت کو ہی اپنی صحافتی سیاست کا محور بنا لیااور عددی کامیابی حاصل کرکے پی ایف یو جے کو فتح کر لیا۔نیوزلائن کے مطابق کوئٹہ میں ہونیوالے پاکستان فیڈرل یونین آف جرنلسٹس کے الیکشن میں اپنے بدترین مخالفین کیساتھ گٹھ جوڑ کر کے اور اپنے پرانے ساتھیوں کو پس پشت ڈال کر اسلام آباد سے تعلق رکھنے والے افضل بٹ نے پی ایف یو جے کی صدارت حاصل کرلی۔کراچی سے تعلق رکھنے والے ایوب جان سرہندی سیکرتری جنرل‘ لاہور کے وسیم فاروق شاہد خزانچی چنے گئے۔سلیم شاہد‘ بخت زادہ یوسفزئی‘ خالد کھوکھر اور امین عباسی نائب صدور جبکہ عبدالخالق‘ یاسر علی‘ لال اسد پٹھان اور راجہ ہارون اسسٹنٹ سیکرٹری بن گئے۔نیوزلائن کے مطابق پی ایف یو جے کی صدارت حاصل کرنے کیلئے افضل بٹ نے کراچی کے اپنے برے دنوں کے ساتھی اور سابق سیکرٹری جنرل پی ایف یو جے خورشید عباسی اورسابق صدر کراچی پریس کلب امتیاز فاران اور موجودہ صدر کراچی پریس کلب فاضل جمیلی کو مکمل نظر اندازکیا اور محض عددی برتری اور پی ایف یو جے کی صدارت حاصل کرنے کیلئے سیاسی پلٹا کھایا اور اپنے اصولی مخالف ایوب جان سرہندی کیساتھ سیاسی پیار کی پینگیں بڑھا لیں۔صرف کراچی ہی نہیں لاہور کے اپنے پرانے ساتھی اور لاہور پریس کلب کے سابق صدر ارشد انصاری اور فیصل آباد کے اپنے پرانے ساتھی سابق سیکرٹری جنرل پی ایف یو جے شمس الاسلام ناز کو بھی پس پشت ڈال دیا۔اس سے قبل پشاور میں ہونیوالے بی ڈی ایم میں بھی افضل بٹ نے اصولوں کی بجائے عددی اکثریت کا نعرہ بلند کیا تھا اورافضل بٹ کے عددی برتری کے نعروں کی وجہ سے ہی پشاور بی ڈی ایم میں پی ایف یو جے کے سینئرز نے الیکشن نہ کروانے اور یونیفکیشن کمیٹی و الیکشن کمیٹی توڑنے کا اعلان کر دیا تھا۔اور ان کی اسی عددی برتری کے نعروں کی وجہ سے پشاور بی ڈی ایم ناکام ہو گیا تھا۔ اصولوں کے نعرے لگا کر پرویز شوکت کے مدمقابل آنے والے افضل بٹ کے اصولوں کی بجائے عددی اکثریت کی باتیں کرنے پر پی ایف یو جے کی سنیئر قیادت نے افسوس کا اظہار کیا ہے اور اسے پی ایف یو جے کی ناکامی قرار دیا ہے۔نیوز لائن کے مطابق افضل بٹ گروپ نے کوئٹہ بی ڈی ایم میں خیبر یونین آف جرنلسٹس کے منتخب افراد کی بجائے اپنی پسند کے افراد کو مدعو کیا جبکہ خیبر یونین آف جرنلسٹس نے کوئٹہ جانے والے اپنے غیرمنتخب ممبران کے خلاف کارروائی کرنے کا علان کیا ہے۔ عددی برتری کیلئے افضل بٹ گروپ نے بہاولپور یونین آف جرنلسٹس میں بھی بہاولپور کی بجائے بہاولنگر اور دوسرے شہروں کے افراد کو بھی شامل کیا۔سکھر یونین آف جرنلسٹس میں لاڑکانہ دادو اور دیگر علاقوں کے لوگ شامل کئے گئے جبکہ حیدر آباد یونین آف جرنلسٹس میں بھی دوسرے شہروں کے افراد شامل کئے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔

Related posts