وزیر اعظم کی توہین‘ پیمرا کا اے آر وائی کو نوٹس

اسلام آباد (نیوزلائن)پاکستان الیکٹرانک میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی نے اے آر وائی نیٹ ورک کو تین شو کاز نوٹس جاری کیے ہیں ۔ ان میں سے ایک نوٹس وزیر اعظم کے خلاف تبصرہ کرنے پر جاری کیا گیا ہے۔ کچھ دن قبل شاہد لطیف نے ایک مہمان کی حیثیت سے اے آر وائی پروگرام میں شرکت کے دوران وزیر اعظم کے خلاف گستاخانہ الفاظ استعمال کیے تھے۔ جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ دی رپورٹرز پروگرام میں مہمان نے وزیر اعظم کے خلاف گستاخانہ الفاظ استعمال کیا لیکن پروگرام کے ہوسٹ نے نہ تو مہمان کو روکا اور نہ ہی کسی طرح کی مداخلت کی۔ اس طرح یہ پروگرام پیمرا کے اصولوں کی خلاف ورزی کا مرتکب ہوا ہے۔متعلقہ چینل کو خبر دار کیا جاتا ہے کہ کسی بھی اہم شخصیت کے خلاف توہین آمیز الفاظ کا استعمال پیمرا ایکٹ 2007 کے کلاز 20 ایف ، 15(1) اور دوسرے کئی ضوابط کی خلاف ورزی کے زمرے میں آتا ہے۔ اے آر وائی کو 31 مارچ سے قبل جواب جمع کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔ غیر تسلی بخش جواب کی صورت میں ‘دی رپورٹرز ‘ پروگرام پر پابندی یا اے آر وائی کے آپریٹنگ لائسنس کی معطلی بھی عمل میں آ سکتی ہے۔ اس کے علاوہ ٹی وی چینل کو 1 ملین روپے جرمانہ بھی کیا جا سکتا ہے۔

Related posts