ن لیگ کا پانامہ کیس کی جنگ گلی محلوں میں لڑنے کا فیصلہ

اسلام آباد(نیوزلائن)مسلم لیگ ن نے پانامہ کیس کی جنگ گلی محلوں میں لڑنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ سپریم کورٹ سے پانامہ کیس کے متوقع فیصلہ کے تناظر میں ن لیگ نے مختلف حکمت عملیاں بنا لی ہیں۔ذرائع کے مطابق مسلم لیگ ن حالات کے تناظر میں سپریم کورٹ سے اپنے خلاف فیصلے کا آپشن بھی زیر غور رکھ رہی ہے اور اسی پس منظر کیساتھ اپنی پالیسی تشکیل دے رہی ہے۔ ن لیگی حلقوں کے مطابق سپریم کورٹ سے میاں نواز شریف یا مریم نواز کی نااہلی کا فیصلہ آیا تو مسلم لیگ ن اس کے خلاف شدید احتجاج کرے گی۔ احتجاج کو انتہائی سخت اور پر تشدد رکھا جائے گا۔احتجاج کیلئے پنجاب کا میدان چنا گیا ہے احتجاجی مظاہرے لاہور‘ فیصل آباد‘ گوجرانوالہ‘ ساہیوال‘ ملتان‘ ساہیوال‘ راولپنڈی اور پنجاب کے دیگر بڑے شہروں میں کئے جا سکتے ہیں۔نیوزلائن کے مطابق ن لیگی حلقے اس کے اشارے بھی دینا شروع ہو گئے ہیں جس کا مقصد بااثر حلقوں کو دباؤ میں لانا اور سپریم کورٹ سے اپنے خلاف متوقع فیصلے کو رکوانا ہے۔ پارٹی کے اندر اس حوالے سے مختلف آراء پائی جاتی ہیں تاہم پارٹی کے اعلیٰ حلقے اس کا فیصلہ کر چکے ہیں کہ پانامہ کیس میں پیچھے نہیں ہٹا جائے گا اور لڑائی گلی محلوں میں بھی لڑنا پڑی تو گریز نہیں کیا جائے گا۔

Related posts