مزدور ڈے پر بھی محنت کشوں کو چھٹی نہ ملی

لاہور (نیوزلائن)محنت کشوں کے عالمی دن پر بھی پنجاب کے مزدوروں کو چھٹی نصیب نہ ہوئی۔ صوبہ کے تمام شہروں میں صنعتی ادارے اور تجارتی مراکز کھلے رہے اور محنت کش دیہاڑی لگا کر اپنے بچوں کیلئے روزی کمانے کیلئے سرگرداں رہے۔ مزدوروں کے حقوق کیلئے بلند بانگ نعرے لگانے اور بھاری بھرکم دعو ے کرنے والے سیاستدانوں کے صنعتی تجارتی اداروں میں بھی یوم مئی کی چھٹی نہ کی گئی۔ مزدور تنظیموں نے یوممئی پر جلوس نکالے اور جلسے کئے مگر فیکٹریوں اور کارخانوں کی بندش کروانے میں کامیاب ہو سکے اور نہ ہی مزدور حقوق یقینی بنانے کیلئے کوئی عملی اقدام تجویز کر سکے۔ یوم مئی پر عام تعطیل کے باوجود مزدورمعمول کے مطابق اپنے روزگار کیلئے چوکوں، چوراہوں اور بازاروں میں اپنے مقررہ مقامات پرکھڑے نظر آئے اور ان میں سے اکثریت کو یوم مئی اور اپنے حقوق بارے میں کچھ علم نہ تھا۔ اسی طرح مختلف مقامات پر فیکٹریاں بھی اپنے معمول کے مطابق کھلی رہیں اور مزدور طبقہ اپنی ڈیوٹیوں پر موجود رہا۔ پاکستان ریلوے میں ڈیلی ویجز پر کام کرنے والے مزدور بھی گزشتہ روز اپنی ڈیوٹی پر حاضر رہے۔ اسی طرح ورکشاپس، ہوٹلوں، ٹھیلہ لگانے والے والے اوردیہاڑی دار طبقہ چھٹی کرنے کی بجائے اپنے اہل خانہ کا پیٹ پالنے کے لئے روزی روٹی کی تلاش میں نظر آیا۔ دوسری طرف سرکاری ملازمین، بڑے نجی دفاتر، تاجروں اور دیگر طبقات نے مزدوروں کے نام پر دی جانے والی تعطیل کو خوب انجوائے کیا۔

Related posts