تحریک انصاف کااصغر خان کیس پر عمل درآمد کے لیے عدالت جانے کا فیصلہ

اسلام آباد(نیوزلائن) پاکستان تحریک انصاف نے حکومت کو ٹف ٹائم دینے کی پالیسی کا عملی آغاز کر رکھا ہے۔ ابھی تک حکومت کو ڈان لیکس کیس اور پانامہ کیس میں سنبھلنے کا موقع نہیں ملا کہ کپتان نے اپنا گھیرائو مزید سخت کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ اس ضمن میں اب چئیرمین تحریک انصاف نے اصغر خان کیس پر عمل درآمد کے لیے عدالت جانے کا فیصلہ کرلیا ہے۔تفصیلات کے مطابق عمران خان کی زیر صدارت بنی گالہ میں ہونے والے تحریک انصاف کے اہم اجلاس میں ڈان لیکس اور پاناما کیس پر طویل مشاورت کی اور سجن جندال اور نواز شریف کی ملاقات پر تشویش کا اظہار کیا گی ۔ترجمان تحریک انصاف کی جانب سے جاری کیے گئے اعلامیے کے مطابق اجلاس میں پاناما لیکس کے فیصلے پر عملدرآمد کے حوالے سے مختلف پہلووٴں پرغور کیا گیا جب کہ اصغر خان کیس پر عمل درآمد کروانے کے لیے عدالت سے رجوع کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔اعلامیہ کے مطابق ڈان لیکس پرتحقیقاتی کمیشن کی رپورٹ اورحکومتی طرزعمل کا جائزہ بھی لیا گیا اور سجن جندال و نوازشریف کی خفیہ ملاقات پرگہری تشویش کا اظہار کیا گیا۔علامیہ میں کہا گیا ہے کہ تحریک انصاف سمجھتی ہے کہ حکومت پاناما اورڈان لیکس دونوں معاملات کو دبانا چاہتی ہے اور اداروں میں تصادم اورتناوٴبرپا کرکےبچ نکلنےکی کوششیں جاری ہیں۔اعلامیہ کے مطابق تحریک انصاف اس بات پر متفق ہے کہ وزیراعظم ڈان لیکس کےحقیقی کرداروں کوبچا رہے ہیں جب کہ ڈان لیکس کاایک کردارقومی سلامتی اورحساس اجلاسوں کاحصہ ہے تو دوسری جانب کابینہ کےسینئراراکین قومی سلامتی کےاداروں پر کیچڑاچھال رہےہیں۔

Related posts