چوری اور سینہ زوری: فیسکو 12ارب روپے کی ٹیکس چوری میں ملوث نکلا



فیصل آباد(ندیم جاوید)فیصل آباد الیکٹرک سپلائی کمپنی 12ارب روپے کی ٹیکس چوری میں ملوث نکلی۔شہریوں پر بجلی چوری کے الزامات مسلسل دہرانے والا اور معمولی سی غلطیوں پر شہریوں کیخلاف کارروائی کرنے والا ادارہ’’ فیسکو‘‘ خود اربوں روپے کی ٹیکس چوری میں ملوث ہے۔ ٹیکس چور فیسکو شہریوں سے سیلز ٹیکس اور اپنے ملامین کا انکم ٹیکس کٹوتی اور وصول کرنے کے باوجود یہ کٹوتی شدہ رقم ایف بی آر کو ادا کرنے سے انکاری ہے ۔نیوزلائن کے مطابق فیسکو نے ایف بی آر کے اربوں روپے ادا کرنے ہیں مگر ٹیکس چوری کرکے سینہ زوری کر رہا ہے اور شہریوں سے وصول شدہ سیلز ٹیکس ایف بی آر کو ادا کرنے سے انکاری ہے۔ ذرائع کے مطابق فیسکو نے ایف بی آر کی 12ارب روپے سے زائد رقم ادا کرنے ہی جو مختلف حیلے بہانے سے روک رکھی ہے ۔پرانی ادائیگیوں کے علاوہ فیسکو ہر سال کے ٹیکس میں سے بھی ادائیگیاں نہیں کرتا اور اس کی طرف واجب الادا رقم میں ہر گزرتے دن کیساتھ اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔ایف بی آرنے فیسکو سے وصولی کرنے کیلئے متعدد اقدامات کئے مگر فیسکو حکام ٹیکس چوری پر شرمندہ ہونے کی بجائے چوری اور سینہ زوری سے کام لیتے ہیں اور ایف بی آر حکام کے خلاف اوچھے ہتھکنڈے استعمال کرنا شروع کر دیتے ہیں۔

Related posts