پیپلز پارٹی سیاسی انجینئرنگ کی ہر کوشش کی مخالفت کرے گی:زرداری


اسلام آباد(نیوزلائن)سابق صدرِ پاکستان اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمینٹیرینز کے صدر آصف علی زرداری نے پاکستان پیپلز پارٹی کے 50 ویں یوم تاسیس کے موقع پر اپنے پیغام میں کہا کہ وہ اس شاندار موقع پر ملک کے اندر اور بیرون ملک مقیم تمام پارٹی کارکنوں اور تمام جمہوریت پسند عوام کو مبارکباد پیش کرتے ہیں۔ یہ خوشیاں منانے کا موقع ہے اور اس کے ساتھ ساتھ ہمیں اپنی غلطیوں کا تجزیہ، پارٹی کی تنظیم نو اور اپنے اندر جھانک کر دیکھنا چاہئے۔ عوام کی خدمات کے حوالے سے پارٹی اپنے ریکارڈ پر فخر کرتی ہے۔ پارٹی نے نعرے طاقت کا سرچشمہ عوام ہیں نے گزشتہ 50 سالوں میں پاکستان کا سیاسی نقشہ ترتیب دیا ہے۔ حقیقت میں یہ عوام کے ضمیر پر نقش ہو چکی اور کبھی بھی مٹائی نہیں جا سکتی۔ پارٹی نے تسلسل کے ساتھ ایک کے بعد دوسری ڈکٹیٹرشپ کا مقابلہ کرنے کے ساتھ ساتھ ملک کو متفقہ آئین دیا، نیوکلیئر اور میزائل ٹیکنالوجی دے کر ملک کے دفاع کو مضبوط کیا، مشترکہ مفادات کونسل بنا کر صوبوں کو آواز دی، مسلم ممالک کو اجتماعی آواز دی، 1971ء میں گنوائی جانے والی اراضی واگزار کروائی اور خواتین، محنت کشوں، کسانوں اور کچلے ہوئے طبقات کو بااختیار بنایا اور انہیں جبر سے آزاد کرایا۔ یہ پاکستان پیپلز پارٹی ہی ہے جس نے شملہ سمجھوتے کے ذریعے پاکستان اور بھارت کے درمیان جنگوں کو رکوایا۔ یہ پیپلز پارٹی ہی ہے جس نے پاکستان میں پہلی مرتبہ حبس بے جا کو قانون میں متعارف کروا کر تمام شہریوں کے انسانی حقوق کا تحفظ کیا۔ اپنے اصولوں اور آئیڈیلز کے لئے پارٹی کے دو سربراہوں اور لاتعداد کارکنوں نے اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کیا۔ پارٹی کے ریکارڈ، اور جمہوریت کے لئے اس کی جد و جہد کا کوئی ثانی نہیں اور ملک میں کوئی سیاسی جماعت پیپلز پارٹی کی خدمات کے پاسنگ بھی نہیں۔ پارٹی اس بات پر یقین رکھتی ہے کہ سیاسی تبدیلی آزادانہ اور منصفانہ انتخابات کے ذریعہ آنی چاہئے۔ پیپلز پارٹی نے ہمیشہ جوڑ توڑ کے ذریعہ سیاسی تبدیلی کی مخالفت کی ہے اور کرتی رہے گی۔ پارٹی سیاسی انجینئرنگ کرنے کی اور ملک میں مذہبی نسل پرستی تھوپنے کی ہر کوشش کی مخالفت کرتی رہے گی۔

Related posts

Leave a Comment