کراچی: ہسپتال کے قریب تین نوزائیدہ بچوں کی لاشیں برآمد


کراچی(نیوزلائن) کراچی میں نوزائیدہ بچوں کی لاشیں ملنے کے واقعات میں خوفناک حد تک اضافہ، ایم اے جناح روڈ پر ہسپتال کے قریب سے نوزائیدہ بچوں کی 3 لاشیں ملیں، پولیس واقعے میں ملوث کسی شخص یا ادارے کا تعین نہ کر سکی۔ خالقِ کائنات کی افضل ترین تخلیق کو گناہوں تلے روندنے کے واقعات تھمنے کا نام نہیں لے رہے، کراچی کی ایم اے جناح روڈ پر ہسپتال کے نزدیک سے تین نوزائیدہ بچوں کی لاشیں ملیں، اطلاع ملنے پر ریسکیو ادارے کے رضا کاروں نے لاشیں تحویل میں لے لیں۔ دوسری جانب ریسکیو اداروں کے اعدادوشمار بھی اس معاملے میں خوفناک مستقبل کی جانب اشارہ کر رہے ہیں۔ 2017ء میں ملک بھر سے 755 نوزائیدہ بچوں کی لاشیں ملیں جن میں سے 310 کراچی کی کچرا کنڈیوں اور گٹروں سے برآمد ہوئیں۔ رواں سال جنوری میں 15 فروری میں 22 اور مارچ کے 14 دنوں میں 12 نوزائیدہ بچے بے رحمی کی بھینٹ چڑھ چکے ہیں۔ ماں کے پیٹ میں سانس لیتے ننھے پھولوں کو گود تک پہنچنے سے پہلے موت کی آغوش میں پہنچانے والوں کا تعین نہ پولیس کرتی ہے اور نہ سرکار کے کانوں پر اس قبیح اور ظالمانہ فعل کے معاملے میں کوئی جوں رینگتی ہے۔

Related posts