الیکشن مہم: سرکاری ملازمین کو تین تنخواہیں اضافی دینے کا اعلان


اسلام آباد(نیوزلائن) وفاق کے سرکاری ملازمین کی موجیں لگ گئیں، وزیرِاعظم نے تمام ملازمین کو تین ماہ کی تنخواہ بطور اعزازیہ دینے کا اعلان کر دیا، مستقبل میں مستقل پالیسی بنانے کی خواہش کا بھی اظہار کیا۔ زیرِاعظم شاہد خاقان عباسی نے تمام وفاقی سرکاری ملازمین کیلئے تین ماہ کی بنیادی تنخواہوں کے برابر اعزازیہ دینے کا اعلان کیا ہے۔ اس حوالے سے وزیرِاعظم آفس نے نوٹیفکیشن بھی جاری کر دیا گیا ہے۔ وزیرِاعظم کے پرنسپل سیکریٹری کی جانب سے جاری نوٹیفکیشن کے مطابق وزیرِاعظم نے چیئرمین اقتصادی رابطہ کمیٹی کی حیثیت سے ایک سمری کی منظوری دی ہے جس کے تحت وفاقی ملازمین کو تین بنیادوں تنخواہوں کے مساوی خصوصی اعزازیہ دیا جائے گا۔ یہ خصوصی اعزازیہ رواں مالی سال 18-2017ء کے بجٹ سے دیا جائے گا۔ وزیرِاعظم آئندہ بھی سرکاری وفاقی ملازمین کو اعزازیہ دینے کی مستقل پالیسی بنانے کا عندیہ بھی دیدیا ہے۔ دوسری جانب وفاقی حکومت نے بجٹ کی منظوری کے دوران خدمات فراہم کرنے والے سرکاری ملازمین کے لیے پانچ ماہ کی بنیادی تنخواہ اعزازیہ دینے کا اعلان کیا ہے۔ بعض حلقے مسلم لیگ ن کے اس اقدام کو الیکشن مہم کا حصہ قرار دے رہے ہیں۔ سیاسی رہنماؤں کا کہنا ہے کہ ایسے موقع پر جبکہ الیکشن کا اعلان ہو چکا ہے اور حکومت اگلے چند دن میں اپنی مدت پوری کرکے ختم ہونے جا رہی ہے ۔ پانچ سال تک سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں معمولی اضافہ کرنے والی حکومت کا تین تنخواہیں ملازمین کو بطور اعزازیہ دینے کا اعلان الیکشن مہم کے علاوہ کچھ نہیں ہے۔

Related posts