این اے 106میدان جنگ بن گیا:فلیکس تنازعہ پر 6افراد زخمی


فیصل آباد(نیوزلائن)فیصل آباد کے نواحی علاقے میں مسلم لیگ ن کے امیدوار رانا ثناء اللہ خاں اور پی ٹی آئی کے امیدوار ڈاکٹر نثار احمد کے حامیوں میں فلیکس لگانے کا تنازعہ تصادم بن گیا۔فائرنگ کے تبادلے میں دونوں اطراف کے تین تین افراد زخمی ہوگئے۔ نیوزلائن کے مطابق رانا ثنا ء اللہ اور ڈاکٹر نثار احمد کے حامیوں میں اشتہاری فلیکس لگانے کے تنازعہ پر گولیاں چل گئیں۔ تشہیری فلیکسز لگانے کے تنازع پر سابق صوبائی وزیر قانون رانا ثناءاللہ اور پی ٹی آئی کے امیدوار ڈاکٹر نثار جٹ کے حامیوں میں فائرنگ سے 6 افراد زخمی ہو گئے۔ تھانہ ساندل بار کے علاقہ چک نمبر 59ج ب میں رانا ثناءاللہ اور پاکستان تحریک انصاف کے امیدوار ڈاکٹر نثار جٹ کے حامیوں کے درمیان الیکشن کی تشہیری فلیکسز لگانے کے تنازع پر جھگڑا ہوگیا۔ اور دونوں گروپوں کی جانب سے فائرنگ کے تبادلہ میں دونوں گروپوں کے تین تین افراد زخمی ہوگئے۔ جنہیں فوری طور پر طبی امداد کیلئے الائیڈ اور سول اسپتال منتقل کردیا گیا۔ پی ٹی آئی کے امیدوار ڈاکٹر نثار جٹ کی جانب سے الزام عائد کیا گیا کہ رانا ثناءاللہ کے حامی حالات کو خراب کرنے اور الیکشن کو ہائی جیک کرنے کی کوشش میں ہیں۔ اور لیگی کارکنان الیکشن کو متاثر کرنا چاہتے ہیں۔ جبکہ ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ فائرنگ سے زخمی ہونے والے تمام افراد کی حالت خطرے سے باہر ہے اور انہیں طبی امداد دی جارہی ہے۔ پولیس کے مطابق فلیکس لگانے کے معاملے پر فائرنگ رانا ثنا اللہ اور نثار جٹ گروپ میں ہوئی، فائرنگ کرنیوالوں کی گرفتاری کیلئے چھاپے مارے جا رہے ہیں۔

Related posts