بھارتی سیاست میں ہلچل‘ پنجاب اسمبلی کے نصف ارکان مستعفی

indian-punjabستلج جمنا لنک کینال معاملے پر بھارت کی عدالت عالیہ کے فیصلے کیخلاف پنجاب کانگریس کے صدر سمیت تمام اراکین نے استعفے دیدے ہیں۔ بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق ستلج جمنا لنک کینال (ایس وائی ایل) معاملہ پر سپریم کورٹ کے فیصلہ سے پنجاب کانگریس کے صدر کیپٹن امریندر سنگھ نے لوک سبھا کی رکنیت سے استعفی دے دیا ہے۔ ان کے ساتھ ریاست میں کانگریس کے تمام ممبران اسمبلی نے بھی استعفی دے دیا ہے۔ کیپٹن امریندر نے اپنا استعفیٰ لوک سبھا کے سپیکر کو بھیج دیا ہے۔ وہیں کانگریس کے ممبران اسمبلی نے بھی اپنے اپنے استعفے اسمبلی سپیکر کو بھیج دیے ہیں۔ خیال رہے کہ بھارتی سپریم کورٹ نے ستلج جمنا رابطہ کینال (ایس وائی ایل) تنازع کے معاملے میں پانی کی تقسیم معاہدے کو منسوخ کرنے سے متعلق ایکٹ کو غیر قانونی قرار دیا ہے۔ جسٹس انل آر دوے کے زیر صدارت پانچ رکنی بنچ نے ایس وائی ایل نہر تنازع میں صدر کے ریفرنس پر اپنا اہم فیصلہ سناتے ہوئے پانی کی تقسیم سے متعلق پنجاب معاہدہ تنسیخ ایکٹ 2004ء کو غیر آئینی قرار دیا ہے۔ سپریم کورٹ کا اپنے فیصلے میں کہنا ہے کہ پانی کی تقسیم سے متعلق پنجاب حکومت کی طرف سے بنایا گیا قانون غیر آئینی ہے۔ عدالت عظمیٰ نے فیصلے میں کہا کہ پنجاب حکومت دیگر ریاستوں کے ساتھ کئے گئے معاہدے کو یکطرفہ طریقے سے ختم نہیں کر سکتی۔

Related posts