توہین مذہب کا الزام:لاثانی سرکار پر سب انجنیئر کا چھری سے حملہ


فیصل آباد(نیوزلائن)منڈی بہاؤالدین کے سب انجنیئر نے توہین مذہب کا الزام عائد کرتے ہوئے ایک مذہبی جماعت کے سربراہ ’’لاثانی سرکار‘‘ پر چھری سے حملہ کردیا۔ جس سے وہ شدید زخمی ہو گئے۔ ہنگامہ آرائی میں سات دوسرے افراد بھی زخمی ہوگئے۔رپورٹس کے مطابق تھانہ بٹالہ کالونی کے علاقہ غلام رسول نگر میں ایک مذہبی جماعت کے سربراہ مسعود احمد صدیقی ’’لاثانی سرکار‘‘ پر منڈی بہاؤ الدین کے رہائشی سب انجینئر غلام محی الدین نے چھری سے حملہ کردیا۔ چھری کے واران کے پیٹ میں لگے جس سے وہ شدید زخمی ہوگئے ۔ اس ہنگامہ آرائی میں عابد سعید ‘ اکرم‘جاوید‘کاشف‘ عمران‘ خالد اور خلیل بھی زخمی ہوئے۔مضروب کی مذہبی جماعت کے افراد نے حملہ آور کو موقع پر ہی پکڑ لیا اور اسے شدید تشدد کا نشانہ بنایا۔ تھانہ بٹالہ کالونی پولیس نے موقع پر پہنچ کر حملہ آور کو زخمی حالت میں اس مذہبی جماعت کے افراد کے چنگل سے رہائی دلائی۔ مذہبی جماعت کے افراد بعد ازاں ہسپتال بھی پہنچ گئے اور ہسپتال کی ایمرجنسی سمیت متعدد حصوں کو اپنے کنٹرول میں لے لیا۔ ہسپتال میں مذہبی جماعت کے کارکنوں کی میڈیا کے نمائندوں سے بھی تلخ کلامی ہوئی۔ زخمی حملہ آور غلام محی الدین نے پولیس کو دئیے گئے بیان میں مسعود احمد صدیقی پر توہین مذہب کا الزام عائد کیا ہے اور اسی کو اس پر حملے کا جواز قرار دیا ہے۔

Related posts