فیصل آباد میں سینکڑوں بوگس بنک اکاؤنٹس کھلوائے جانے کا انکشاف


فیصل آباد (احمد یٰسین) فیصل آباد میں سینکڑوں بوگس بنک اکاؤنٹ کھلوائے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔ غریب پلے داروں‘ بروکرز‘ دیہاڑی مزدوروں‘ آفس ورکرز‘ گھریلو ملازمین کے نام پر کھلوائے گئے بوگس اکاؤنٹس سے کروڑوں کی ٹرانزیکشن کی جارہی ہے۔بوگس بنک اکاؤنٹس کھلوانے میں متعدد سیاسی شخصیات اور بڑے سرمایہ دار ملوث پائے جارہے ہیں۔ نیوزلائن کے مطابق فیصل آباد میں سینکڑوں بوگس بنک اکاؤنٹس کھلوائے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔ بوگس اکاؤنٹس اہم شخصیات نے اپنے آفس ورکرز‘ گھریلو ملازمین‘ دیہاڑی مزدوروں‘ پلے داروں‘ بروکروں کے نام پر کھلوا رکھے ہیں۔ بوگس بنک اکاؤنٹس کھلوانے اور انہیں آپریٹ کرنے میں بنک منیجرز ‘ بنک افسران اور بنک مالکان کے نام بھی سامنے آرہے ہیں۔ ذرائع کے مطابق فیصل آباد کی سوتر منڈی کا زیادہ تر کام بوگس بنک اکاؤنٹس کے ذریعے ہی چلانے کی رپورٹس پہلے بھی سامنے آتی رہیں۔ کچھ عرصہ قبل سوتر منڈی کی ایک اہم شخصیت نے بوگس اکاؤنٹس کے گورکھ دھندے میں الجھ کر خودکشی بھی کرلی تھی۔ سوتر منڈی کے غریب پلے داروں اور بروکرز کے بنک اکاؤنٹس سے کروڑوں روپے کی ٹرانزیکشن ہورہی ہے جس کا اکاؤنٹ ہولڈر کو بھی علم نہیں ہوتا۔ فیصل آباد کی غلہ منڈی اور سبزی منڈی سدھار میں بھی ایسی ہی صورتحال سامنے آرہی ہے۔ بڑے بڑے صنعتکار‘ ایکسپورٹر اور سیاسی شخصیات بھی اس گورکھ دھندے میں ملوث ہیں۔ اس معاملے میں متعدد بیوروکریٹس کے نام بھی سامنے آرہے ہیں۔ بوگس اکاؤنٹس کے گورکھ دھندے نے فیصل آباد کے ہر بزنس سیکٹر کو جکڑ رکھا ہے مگر سوتر منڈی اس کا بڑا مرکز بتایا جارہا ہے۔

Related posts