ضیاء الحق کی آمریت کیخلاف یوم سیاہ: پیپلزپارٹی کا احتجاجی کیمپ

فیصل آباد (نیوز لائن) سابق وزیراعظم ذوالفقارعلی بھٹو شہید کی عوامی جمہوری حکومت کی برطرفی کے خلاف پاکستان پیپلز پارٹی فیصل آباد نے آج یوم سیاہ منایا، اس ضمن میں فیصل آباد کی تنظیم کی جانب سے صبح 10 بجے سے لیکر دوپہر ساڑھے بارہ بجے تک چوک ضلع کونسل میں ایک مرکزی کیمپ قائم کیا گیا۔ جہاں شہر بھر کے کارکن و رہنما مختلف جلوسوں کی صورت میں مرکزی کیمپ میں پہنچے۔ اس موقعہ پر سنئیر رہنما پاکستان پیپلز پارٹی و سابق ایم این اے مہر عبدالرشید‘ ڈویڑنل صدر چوہدری سعید اقبال‘ ضلعی صدر چوہدری محمد اعجاز‘ سٹی صدر رانا نعیم دستگیر خاں، سابق ایم پی اے نورالنساء ملک‘ ڈویڑنل انفرمیشن سکرٹری سمعیہ ناز ایڈووکیٹ‘ سٹی انفرمیشن سکرٹری خاور جاوید راناودیگر نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عالمی قوتوں نے ضیاء الحق کے ذریعے ذوالفقارعلی بھٹو کی عوامی حکومت کو برطرف کرایا۔ کیونکہ وہ نہیں چاہتے تھے پاکستان ایک ایٹمی قوت بن کر ترقی کی شاہراہ پر گامزن ہو۔ مقررین نے کہا کہ ذوالفقار بھٹو کے بعد ان کی بیٹی شہید بے نظیر بھٹو اور آج مرد حر آصف علی زرداری اور پاکستان پیپلزپارٹی کے چیرمین بلاول بھٹو زرداری نے ملک میں آئین، قانون اور جمہوریت کی بالادستی کیلئے ان کا الم اٹھا رکھا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں آج بھی سولین مارشل لاء جیسا نظام مسلط ہے۔ آج بھی آزادی راے پر قدوغن لگا دی گئی ہے۔ ملک کے عوام خوف کی فضاء میں سانس لینے پر مجبور ہیں۔ آصف علی زرداری اور محترمہ تالپور کو ناکردہ گناہوں کی پاداش میں پابند سلاسل کر دیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آصف علی زرداری نے پہلے بھی 12 سال جیل کاٹی لیکن ان پر کوئی جرم ثابت نہ ہوسکا۔

Related posts