عوام کو لوٹنے کیلئے ڈاکٹرز کا ملٹی نیشنل کمپنیوں کیساتھ گٹھ جوڑ


فیصل آباد(ندیم جاوید) عوام کو لوٹنے کیلئے ڈاکٹرز مافیا نے ملٹی نیشنل ادویات ساز کمپنیوں کیساتھ گٹھ جوڑ کررکھا ہے ۔ڈاکٹرز ملٹی نیشنل کمپنیوں سے بھاری مراعات لے کر مہنگی ادویات تجویز کرتے اور ملٹی نیشنل کمپنیوں کی لوٹ مار میں انکاساتھ دیتے ہیں ۔ ڈاکٹرز اور کمپنیوں کا گٹھ جوڑ عوام کودونوں ہاتھوں سے لوٹنے کا باعث بن رہا ہے۔مارکیٹ میں اسی فارمولے کی سستی ادویات میسر ہونے کے باوجود ڈاکٹرز مہنگی اور غیر موثر ادویات پر فوکس کئے ہوئے ہیں۔ نیوزلائن کے مطابق سرکاری ہسپتالوں میں تعینات ماہر ونامور ڈاکٹرز‘پروفیسرز سرجن ودیگر سے دوران ڈیوٹی مختلف میڈیسن کمپنیوں کے میڈیکل ریپ حکومتی پابندی کے باوجود سودے بازی میں مصروف نظر آرہے ہیں۔ہر میڈیکل ریپ ان ڈاکٹر پروفیسرز کو اپنی میڈیسن تجویز کرنے کے عوض شاندار مراعات اور مالی مفادات کی فراہمی پر معاہدے کرنے میں مصروف ہے جس کے نتیجہ میں سرکاری ونجی ہسپتالوں میں نامور اور معروف سینئر ڈاکٹرز وسرجن وپروفیسرز نے ڈیوٹی کے بعد اپنے پرائیویٹ کلینکس پر بلوائے گئے مریضوں سے ہزاروں روپے فیس وصول کرکے انہیں اپنی من پسند میڈیسن کمپنیوں کی ادویات تجویز کردیتے ہیں جو صرف مذکورہ ڈاکٹر کے کلینک سے ملحقہ میڈیسن فارمیسی کے علاوہ شہر بھر کے کسی بھی میڈیسن سٹور یا میڈیسن فارمیسی پر میسر نہیں ہوتی۔ ایک ہی مرض کیلئے ہر ڈاکٹر علیحدہ کمپنی اور نئے نام کی میڈیسن تجویز کررہا ہے جس کی بناء پر ہزاروں روپے فیس دیکر جانے والے مریض اور انکے لواحقین دیگر میڈیکل سٹورز اور میڈیسن فارمیسیوں سے خریدنے کی غرض سے مارے مارے پھررہے ہیں جبکہ مذکورہ ڈاکٹرکے کلینک سے ملحقہ فارمیسی سے تجویز کی گئی میڈیسن مریض کی پہنچ سے بہت دور ہوتی ہے ۔ذرائع کے مطابق میڈیسن کمپنیاں تمام سینئر وماہر ڈاکٹرز سرجن وپروفیسرز کو اپنی میڈیسن تجویز کرنے کے عوض انکے گھروں کے اخراجات سمیت بچوں کی تعلیم‘ انکے غیر ملکی دوروں‘حج عمرہ‘نئے ماڈلز کی گاڑیاں پرائیویٹ ڈرائیورز کی تنخواہوں سمیت گاڑیوں کے پٹرول کیلئے بھی بڑی رقوم کی فراہمی میں مصروف ہیں۔

Related posts