پاکستان علماء کونسل کا آزادی مارچ‘ دھرنے کیخلاف یوم سیاہ کا اعلان

فیصل آباد (نیوز لائن) پاکستان علماء کونسل ڈویژن فیصل آباد نے جمعیت علماء اسلام ف کے دھرنے میں شرکت نہ کرنے کا فیصلہ کیا اورستائیس اکتوبر کو دھرنے اور بھارت کے خلاف یوم سیاہ منانے کا اعلان کیا ہے۔آزادی مارچ میں شرکت سے روکنے کیلئے پاکستان علماء کونسل نے ڈویژن بھر کے مدارس کا اعلیٰ سطحی اجلاس بلا یا۔جس کی صدارت معاون خصوصی مرکزی چیئر مین پاکستان علماء کونسل علامہ طاہر الحسن نے کی۔ اجلاس میں مولانا حبیب الرحمن عابد،قاری کلیم نجم سلفی، مولانا یا سر علوی، مولانا شعیب بخاری،مولانا سعد اللہ لدھیانوی،قاری عثمان نقشبندی، صاحبزادہ حمزہ طاہر، مولانا امین الحق،مولانا اظہار الحق تھانوی، مولانا احمد وفا،ڈاکٹر طاہر قاسمی،حافظ گجر،میاں ارشاد انجم، مولانا عمر وقاص بیگ، مولانا یٰسین بٹ، حافظ سرفراز مجددی، حاجی عبدالجبار،شیخ الحدیث مولانا قاری وقاص, قاری ثاقب, مولانا انصر عباس,مولانا عبدالرحمن دیگر علمائے کرام نے شرکت کی۔ القرآن اسلامک سنٹر گلبرگ میں ہونیوالے اجلاس میں بھارتی جارحیت کی شدید الفاظ میں مذمت کی گئی۔جبکہ شرکاء نے آزادی مارچ سے لاتعلق رہنے پر اتفاق کیا۔علامہ طاہرالحسن نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ حکومت اور حزب اختلاف معاملات کو مذاکرات کے ذریعے حل کریں۔ملک میں انتشار اور فساد پھیلانے کی کوئی بھی سازش کامیاب نہیں ہونے دی جائے گی،افواج پاکستان اور ان کی قیادت کے خلاف پروپیگنڈہ اور الزام تراشی کرنے والے ہندوستان اور اسرائیل کی خدمت کر رہے ہیں، ایسے عناصر کا محاسبہ ہونا چاہیے،مدارس ومساجد کسی دھرنے میں شریک نہیں ہوں گے اور کسی مدرسہ میں چھٹی نہیں کی جائے گی۔دیگر مقررین نے کہاکہ 27اکتوبر 1947کو بھارت نے جموں وکشمیر پر غاصبانہ قبضہ کیا تھا دنیا بھر میں 27اکتوبر کا دن یوم سیاہ کے طور پر منایا جائے گا اور پاکستان علماء کونسل بھی فیصل آباد میں ضلع کونسل سے کشمیریوں کے ساتھ اظہار یکجہتی ریلی نکالے گی۔۔اور بھارت کیخلاف مظاہرہ کیا جائے گا۔

Related posts