ن لیگی رہنما کی سفارش پر کلرک ڈپٹی ڈائریکٹر ایف ڈی اے تعینات

فیصل آباد (ندیم جاوید) گوجرانوالہ ڈوپلیمنٹ اتھارٹی سے نااہلی پر وزارت ہاؤسنگ میں لاہور بھجوایا جانے والا انٹر پاس ہیڈ کلرک مسلم لیگ ن کی اعلیٰ شخصیت کی سفاش پر فیصل آباد ڈویلپمنٹ اتھارٹی میں ڈپٹی ڈائریکٹر لگا دیا گیا۔ پانچ سال سے ایف ڈی اے میں تعینات ڈپٹی ڈائریکٹر ٹاؤن پلاننگ کے بارے میں حقائق جاننے اورانکوائری ہونے کے باوجود اعلیٰ حکام بااثر سیاسی سفارش کی وجہ سے کوئی ایکشن لینے کو تیار نہیں ہیں۔تفصیل کے مطابقڈپٹی ڈائریکٹر ٹاؤن پلاننگ فیصل آباد ارشد وڑائچ کے حوالے سے سامنے آیا کہ وہ اس آسامی کیلئے منظور شدہ کوالیفکیشن بی ایس سی انجنئیرنگ پر پورا نہیں اترتا۔ ارشد وڑائچ کے بارے میں سامنے آیا ہے کہ وہ محض انٹرمیڈیٹ ہے اور جی ڈی اے میں بطور ہیڈ کلرک ڈیوٹی کررہا تھا۔ جی ڈی اے میں نااہلی پرسزا دیتے ہوئے اسے وزارت ہاؤسنگ لاہور بھجوادیا گیا تھا۔ وزارت ہاؤسنگ میں کچھ عرصہ خدمات سرانجام دیتا رہا جہاں سے مسلم لیگ ن کی ایک اہم شخصیت کی سفارش پر اسے فیصل آباد ڈویلپمنٹ اتھارٹی میں ڈیپوٹیشن پر بھجوادیا گیا اور ڈپٹی ڈائریکٹر لگانے کا حکم نامہ جاری کردیا گیا۔ گریڈ بارہ کے ہیڈ کلرک کو گریڈ 18کی سیٹ پر تعینات کرنے کیلئے وزارت ہاؤسنگ کے حکام نے تمام قواعد کو نظر انداز کردیا اور ابھی تک اس معاملے کو نظر انداز کئے ہوئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق اس حوالے سے انٹی کرپشن میں بھی انکوائری کی جارہی ہے اور ذمہ داران کو انٹی کرپشن حکام نے طلب کررکھا ہے۔ زرائع کے مطابق ارشد وڑائچ کی ایف ڈی اے میں ڈیپوٹیشن کی مقررہ تین سالہ مدت مکمل ہوچکی ہے اور 20جون 2016کو ایف ڈی اے حکام نے اسے یہاں سے فارغ کردیا تھا مگر مسلم لیگ ن کے سابق وزیر ہاؤسنگ نے قواعد کو نظرانداز کرکے انہیں دوبارہ ایف ڈی اے میں ہی دوسری مرتبہ ڈیپوٹیشن پر تعینات کرنے کا حکم دیدیا اور دوسری مرتبہ پھر اسے ڈپٹی ڈائریکٹر ہی لگا دیاگیا ۔ذرائع کے مطابق قواعد کی رو سے کسی سرکاری ملازم کو ایک ہی محکمے میں دو مرتبہ ڈیپوٹیشن پر نہیں لگایا جاسکتا مگر ارشد وڑائچ کے معاملے میں اس قانون کی بھی کھلی خلاف ورزی کی گئی۔ اس حوالے سے محکمہ ہاؤسنگ پنجاب کے حکام تمام حقائق سے آگاہ ہیں مگر کوئی بااثر ڈپٹی ڈائریکٹر کیخلاف ایکشن لینے کو تیار نہیں ہے۔

Related posts