پنجاب کے 34نئے سرکاری کالجز میں 1394پوسٹس خالی’ تدریسی عمل معطل

فیصل آباد (نیوز لائن) فیصل آباد سمیت پنجاب کے 34نئے سرکاری کالجز میں 1394پوسٹوں کی منظوری دیے جانے کے ڈیڑھ ماہ بعد بھی ان پوسٹوں پر تعیناتیاں نہیں ہوسکیںجس سے تدریسی عمل تعطل کا شکار ہے ۔نیوز لائن کے مطابق فیصل آباد سمیت پنجاب کے34نئے سرکاری کالجوںمیں1394پوسٹوں کی منظوری ڈیڑھ ماہ قبل دی گئی تھی جس میں سے ٹیچرز کی646آسامیوں جبکہ کلیریکل سٹاف اور درجہ چہارم کے ملازمین کی748پوسٹوں کی منظوری دی گئی تھی فیصل آباد ڈویژن کے سات نئے سرکاری کالجوں میں مجموعی طور پر287پوسٹوں کی منظوری دی گئی تھی جن میں ٹیچرز کی133جبکہ نان ٹیچنگ سٹاف کی154پوسٹیں شامل ہیں ان آسامیوں پر فوری طور پر ٹیچرز ودیگر ملازمین کی تعیناتی عمل میں لانا ضروری تھی مگر اس کے برعکس ڈیڑھ ماہ گزرنے کے باوجودکسی بھی نئے کالج میں ابھی تک ٹیچرز وسٹاف کی تعیناتی عمل میں نہیں لائی گئی ہے جس سے ان کالجوں میں ان گنت مسائل کا سامنا ہے ٹیچرز کی تعیناتی نہ ہونے کی وجہ سے ہزاروں سٹوڈنٹس کی پڑھائی کا شدید حرج ہوا ہے اور انکا قیمتی سال ضائع ہونیکا اندیشہ ہے اسی طرح کلیریکل سٹاف اور درجہ چہارم کے ملازمین کی تعیناتی نہ ہونے سے نئے کالجوں میں انتظامی امور سمیت مختلف معاملات چلانا انتہائی مسئلہ بن گئے ہیں ذرائع کے مطابق فیصل آباد ڈویژن کے سات سرکاری کالجوں سمیت صوبہ بھر34نئے سرکاری کالجوں میں ہائر ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ کی ہدایت پر ستمبر2018میں کلاسز کا آغاز کردیا گیا تھا جس کے بعد فوری طور پر ان کالجوں میں ٹیچنگ ونان ٹیچنگ سٹاف کی تعیناتی عمل میںلانا ضروری تھی مگر اس کے برعکس چھ ماہ تک نئے سرکاری کالجوں میں پوسٹوں کی منظوری ہی نہیں دی گئی چھ ماہ کے صبر آزما انتظار کے بعد ان کالجوں میں بالآخر پوسٹوں کی منظوری تو دیدی گئی مگر اب ڈیڑھ ماہ گزرنے کے باوجود ان پوسٹوں پر ٹیچرز وملازمین کی تعیناتی عمل میں نہیں لائی گئی ہے جس کے باعث نئے سرکاری کالجوں میں درپیش مسائل کو ابھی تک حل نہیں کیاجاسکا ہے فیصل آباد ڈویژن کے جن نئے سرکاری کالجوں میں آسامیوں کی منظوری دیے جانے کے باوجود ابھی تک ٹیچرز وسٹاف کی تعیناتی عمل میں نہیں لائی گئی ہے ان میں گورنمنٹ گرلز کالج ستیانہ بنگلہ’گورنمنٹ بوائز کالج بھوانہ چنیوٹ’گورنمنٹ گرلز کالج پیر پنجہ چنیوٹ’گورنمنٹ گرلز کالج شورکوٹ کینٹ’گرلز کالج سٹلائیٹ ٹاؤن جھنگ’گورنمنٹ گرلز کالج احمد پور سیال جھنگ اور گورنمنٹ گرلز کالج وریام والا جھنگ شامل ہیں۔

Related posts