چائلڈ لیبر کی آڑ میں بھٹہ مالکان کی پکڑ دھکڑ:ریاستی دہشت گر دی


فیصل آباد(نیوزلائن)چائلڈ لیبر کی آڑ میں فیصل آباد سمیت پنجاب بھر میں بھٹہ مالکان کی پکڑ دھکڑ ریاستی دہشت گر دی ہے۔ پنجاب حکومت نے یہ دہشت گردی بند نہ کی تو ملک بھر میں بھٹہ خشت بند کردئیے جائیں گے اور اس کی ذمہ دار پنجاب حکومت ہو گی۔ یہ کہنا ہے انجمن مالکان بھٹہ خشت ایسوسی ایشن کے رہنماؤں حاجی محمد اسلام‘رانا صدیق بلو‘میاں محمد یوسف‘میاں فرمان علی کا۔ ان کا کہنا تھا کہ حکو مت بھٹہ مالکان کے کاروبار پر ضر ب کاری لگا کر لاکھوں خاندانوں کا معاشی قتل کر رہی ہے۔ چائلڈ لیبر آر ڈیننس کے حق میں ہم نے حکو مت کا بھر پور ساتھ دیا اور بچوں سے مشقت کو حرام قرار دینے کے اقدام کا خیر مقدم کیا۔انہوں نے کہا کہ فیصل آباد سمیت پنجاب کے کئی شہروں میں ڈی سی اوز اور کمشنرز صورتحال کا جائزہ لینے کے بغیر بھٹوں کو سیل اور مالکان پر مقدمات درج کروا رہے ہیں جس کی بھر پور مذمت کر تے ہیں۔انہوں نے کہا کہ چائلڈ لیبر کے خلاف بھٹہ مالکان ایسو سی ایشن نے بھر پور ساتھ دیا اور ان کے اقدامات کو عملی جامہ بھی پہنا یا۔ حکو مت کے اعدادو شمار کے مطابق 23ہزار بھٹہ مزدورں کے بچے تعلیم کی غر ض سے سکولوں میں جانے کے لیے کام کر رہے ہیں جبکہ در حقیقت پنجاب بھر میں بھٹوں پر کام کر نے والے مزدور وں کے بچوں کی تعداد تین لاکھ کے قر یب ہے جو تعلیم کے زیور سے آراستہ ہو رہے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ بھٹہ مزوروں کے بچوں کو نہ یو نیفارم میسر ہیں اور نہ ہی کتابیں جبکہ اساتذہ بھی اپنے فرائض سر انجام نہیں دے رہے ہیں۔بھٹہ مالکان چائلڈ لیبر کے خلاف ہیں۔ اگر حکو متی نمائندے کسی بھٹہ پر بچوں سے مشقت کروانے میں مر تکب پائے تو بھٹہ مالک کے ساتھ بچے کے والد پر بھی مقدمہ درج کروایا جائے جو در حقیقت چائلڈ لیبر کرواتا ہے۔

Related posts