کبڈی فیڈریشن کی ملک دشمن سرگرمیوں کا نوٹس لینے کا مطالبہ


فیصل آباد (نیوزلائن) کبڈی فیڈریشن غلط ہاتھوں میں کھیل رہی ہے25ہزار روپے ماہانہ تنخواہ پر مبصر کی نوکری کرنے والے کبڈی کے فروغ کیلئے رقوم بٹورنے میں مصروف ہیں ون ڈے ورلڈکپ میں انڈین کھلاڑیوں کو غیر قانونی طور پر کھلانے والے ملک دشمنوں کیخلاف قانونی کارروائی کرنے سمیت اسلام آباد میں دھرنا دینگے تفصیلات کے مطابق کبڈی کے سابق انٹرنیشنل کھلاڑی عباس بٹ نے گذشتہ روز حبیب الرحمن بھٹی‘شہباز کالو‘ طارق وحید گجر اور نواز رندھاوا کے ہمراہ مقامی ہوٹل میں پریس کانفرنس کے دوران ان خیالات کا اظہار کیا انہوں نے کہا کہ ہمارے خلاف الزامات لگانے والوں کی کوئی حیثیت نہیں ہے کہ وہ ٹیم کا حصہ بن کر پاکستان کی نمائندگی کرنے والے کھلاڑیوں کی کردار کشی کرے جبکہ وہ خود فیصل آباد میں مصروف ہے جوکہ غیر قانونی اقدام ہے عباس بٹ نے کہا کہ آسٹریلیا کے پرچم تلے کھیلانا ملک دشمنی اور ملک وقوم کیساتھ غداری ہے انہوں نے انڈین کھلاڑیوں کو کینڈین قرار دینے کے بیان کو غلط قرار دیتے ہوئے کہا کہ اگر انہوں نے کینیڈین شہریت لی تو بھی وہ انڈین نژاد ہیں عباس بٹ نے ان چاروں کو انڈین کھلاڑیوں کو پاکستان کے خلاف میچ کی سی ٹی ڈی چلا کر صحافیوں کو دیکھائی اور انکے اس غیر قانونی اور ملک دشمن اقدام کو ملک اور قوم سے غداری قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہم نے فیڈریشن کے اس اقدام کیخلاف احتجاجی تحریک چلا رکھی ہے جلد ہی اسلام آباد جاکر دھرنا دینگے اور ذمہ داروں کیخلاف غداری کا مقدمہ درج کروانے کیلئے عدالتی چارہ جوئی سمیت ایف آئی اے ودیگر ایجنسیوں سے رابطے کررہے ہیں حبیب الرحمن بھٹی نے کہا کہ کبڈی فیڈریشن کی سابق قومی کھلاڑیوں کیخلاف مہم جوئی کبڈی کے فروغ میں بڑی رکاوٹ ہے فیڈریشن نے گروپوں کو اکٹھا کرنے کی بجائے کبڈی کی تباہی کا سبب بننے والوں کی پشت پناہی کرنا شروع کررکھی ہے اور پاکستان کے نامور وقومی کھلاڑیوں کو کھلانے کی بجائے ملک دشمن طاقتوں کے ایجنڈے پر کام کرتے ہیں انڈین کھلاڑیوں کو اپنی ٹیم کا حصہ بنا کر پاکستانی پرچم کی بے حرمتی کی ہے سپریم کورٹ آف پاکستان اور حکومت پاکستان کو ان ملک دشمن عناصر کیخلاف سخت ترین ایکشن لینا چاہیے تاکہ آئندہ کسی ملک دشمن سرگرمیوں میں مصروف ہونے کی جرات نہ ہوسکے۔

Related posts