سینکڑوں جعلی رجسٹریشن ہولڈر ’’دڑبہ‘‘ سکول لوٹ مار میں مصروف


فیصل آباد(احمد یٰسین)فیصل آباد میں سینکڑوں غیرقانونی پرائیویٹ سکولوں کی جعلی رجسٹریشن کرائے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔ محکمہ تعلیم کے حکام بھی جعلی رجسٹریشن سکینڈل میں ملوث ہیں جبکہ سکول مالکان قواعدو ضوابط اور قوانین پر پورا نہ اترنے کے باوجود جعلی رجسٹریشن کے سہارے طلبہ کو لوٹنے میں مصروف ہیں۔نیوزلائن کے مطابق محکمہ تعلیم اور ایجوکیشن بورڈ کے حکام کی ملی بھگت سے فیصل آباد کے سینکڑوں سکول جعلی رجسٹریشن کے سہارے طلبہ کو لوٹنے میں مصروف ہیں۔ جعلی رجسٹریشن کے بل بوتے پر دڑبہ سکولوں نے پیف اور ایجوکیشن بورڈز تک بھی رسائی حاصل کر رکھی ہے اور انہیں بھی دھوکے پر دھوکا دئیے جا رہے ہیں۔صورتحال کا علم ہونے کے باوجود محکمہ تعلیم کے حکام جعلی رجسٹریشن کرانے والے سکول مالکان اور اس دھندے میں ملوث محکمہ تعلیم کے اہلکاروں و افسران کے خلاف کارروائی کرنے سے گریزاں ہے۔غیرقانونی ’’دڑبہ‘‘ سکولوں کی جعلی رجسٹریشن کا دھندہ ایک منظم نیٹ ورک کے تحت جاری و ساری ہے اور اس کے تانے بانے ایجوکیشن اتھارٹی کے اعلیٰ افسران اور محکمہ تعلیم کے صوبائی ہیڈ کوارٹر تک جا ملتے ہیں۔جعلی رجسٹریشن میں ملوث محکمہ تعلیم کے اہلکاران اہم پوسٹوں پر تعینات ہیں ۔ جعلی رجسٹریشن سرٹیفکیٹس پر ای ڈی اوز اور ڈی ای اوز کے دستخط اور مہریں بھی اصل پائی گئی ہیں۔ذرائع کے مطابق نجی سکولوں کی جعلی رجسٹریشن کا دھندہ گزشتہ ایک دہائی کے دوران انتہائی عروج پر ہے اور جعلی کرائی گئی رجسٹریشن کی متعلقہ دفاتر سے تصدیق بھی کی جاتی رہی ہے ۔

Related posts

Leave a Comment