فیصل آباد کی آبادی78لاکھ 73ہزار 910نفوس ہو گئی


فیصل آباد(احمد یٰسین)فیصل آباد کی آبادی میں انیس سالوں میں 24لاکھ 44ہزار 363افراد کا اضافہ ہو گیا۔رواں سال ہونیوالی مردم شماری میں ٹیکسٹائل سٹی کی آبادی 78لاکھ 73ہزار910نفوس گنی گئی جو کہ 1998میں ہونیوالی مردم شماری میں 54لاکھ 29ہزار547افراد کی تھی۔ مردم شماری کے اعدادو شمار ظاہرکرتے ہیں کہ اس شہر کی آبادی میں ہر سال سوا لاکھ افراد سے بھی زیادہ کا اضافہ ہوا ہے۔فیصل آباد ضلع کی تحصیل فیصل آباد سٹی میں 19سال کے دوران 10لاکھ 97ہزار615نفوس کا اضافہ ہوا۔اسکی آبادی 21,40,346سے بڑھ کر 32,37,961افراد ہو چکی ہے۔تحصیل فیصل آباد صدر کی آبادی 924,110کی بجائے 14,65,411ہو گئی۔ تحصیل جھمرہ کی آبادی 253,806سے بڑھ کر 332,461ہو چکی۔ تحصیل سمندری کی آبادی 508,637سے بڑھ کر 643,068ہوئی ‘ تحصیل تاندلیانوالہ کی 540,802سے بڑھ کر 702,733ہوئی جبکہ تحصیل جڑانوالہ کی آبادی 10لاکھ61ہزار 846تھی جس میں چار لاکھ تیس ہزار چار سو تیس کا اضافہ ہوا اور یہاں کی آبادی 14لاکھ بانوے ہزار دو سو 76ہوچکی ہے۔ آبادی میں مجموعی طور پر سب سے زیادہ اضافہ تو تحصیل فیصل آباد سٹی میں اور سب سے کم اضافہ تحصیل جھمرہ میں ہوا لیکن اوسط کے حساب سے سب سے زیادہ اضافہ تحصیل سمندری میں ہوا‘ دوسرے نمبر پر تحصیل تاندلیانوالہ رہی‘ تیسرے نمبر پر جھمرہ‘ چوتھے پر جڑانوالہ ‘ پانچویں پر فیصل آباد سٹی اور آخری نمبر پر تحصیل فیصل آباد صدر رہی۔

Related posts