اہل فیصل آباد نے پولیس ایمرجنسی نمبر کو بھی کھیل تماشا بنالیا


فیصل آباد(نیوزلائن)فیصل آباد کے شہریوں نے پولیس ایمرجنسی نمبر ون فائیو کو بھی کھیل بنا لیا۔ ایک سال کے دوران 43فیصد کالز بوگس اور چسکا لینے والی نکلیں۔ منچلے پولیس کو تنگ کرنے کیلئے ‘پولیس اہلکاروں کیساتھ دل لگی کرنے‘ اہلکاروں سے گپیں ہانک کر تنہائی دور کرنے کیلئے بھی ایمرجنسی نمبر15کا استعمال کرتے رہے۔ 42فیصد کالز بوگس اور ٹائم پاس ہونے نے اعلیٰ حکام کو سوچنے پر مجبور کر دیا۔ نیوزلائن کے مطابق پولیس ایمرجنسی نمبر 15پر سال بھر میں بڑ تعداد میں ٹائم پاس کالز آئیں۔ ہنگامی صورتحال میں پولیس کی مددکیلئے مخصوص کئے گئے فون نمبر 15 پرسال بھر غیر متعلقہ فون کالز کا تانتابندھارہا۔ریسکیو15 فیصل آباد کی رپورٹ کے مطابق سال 2017کے دوران مجموعی طور پر تین لاکھ 36 ہزارکالز آئیں ۔ ان میں سے صرف 72 ہزارکالز ایمرجنسی میں پولیس کی مدد لینے کے بارے میں تھیں۔ایک لاکھ 20ہزارسے زائد فون کالز معلومات کے حصول کیلئے کی گئیں جبکہ ایک لاکھ 44 ہزارسے زائد فون کالزبوگس اورفضول پائی گئیں۔ریسکیو15حکام کا کہنا ہے کہ بہت بڑی تعداد ایسی کالز کی ہے جو صرف دل لگی اور اہلکاروں کو تنگ کرنے کیلئے تھیں۔ کالز کرکے خواتین کے اہلکاروں کو تنگ کرنے کی شکایات بھی عام ہیں۔ جبکہ بچے بھی پولیس اہلکاروں کیساتھ بات کرنے کے چکر میں کال ملا لیتے ہیں۔ رات کے اوقات میں شہری اور خاص طور پر خواتین گپیں ہانکنے کیلئے بھی کال ملا لیتی ہیں۔ ریسکیو اہلکاروں کا کہنا ہے کہ رانگ کالز کی بھرمار سے وہ انہیں شدید دشواری کا سامنا ہے ۔

Related posts