فیصل آباد میں دل کے مریض سالانہ11لاکھ سے تجاوز کر گئے


فیصل آباد(نیوزلائن)فیصل آباد میں دل کا مرض انتہائی تیزی سے بڑھنے لگا۔ فیصل آباد سے تعلق رکھنے والے دل کے مریض علاج معالجے کیلئے ہسپتالوں کا رخ کرتے پائے گئے ۔سال بھر میں گیارہ لاکھ سے اہل فیصل آباد دل کے مرض کا شکارہو کر ہسپتال پہنچے اور دواؤں سے دل کا علاج کروانے کی کوشش کر رہے ہیں ۔بڑی تعدادکا علاج دواؤں سے نہ ہوسکا تو سرجری تک بھی نوبت پہنچ گئی۔نیوزلائن کے مطابق دل کے عارضے میں مبتلا ہو کر سب سے زیادہ مریض فیصل آباد انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی میں آئے جن کی تعداد6لاکھ سے زائد تھی۔سول ہسپتال کے دل وارڈ میں دل کے مریضوں کی آمد بھی بڑی تعداد میں رہی۔ یہاں تین لاکھ سے زائد مریضوں نے رجوع کیا۔ جبکہ الائیڈ ہسپتال کے دل وارڈ میں بھی تین لاکھ مریض آئے۔زیادہ تعداد میں دل کے مرض کی ابتدائی سٹیج پر ہی تھے۔ اور انہیں آؤٹ ڈور میں علاج معالجے کی سہولت فراہم کی گئی ۔ڈیڑھ ہزار کے قریب مریضوں کا مرض زیادہ بڑھ چکا تھا اور انہیں سرجری کروانا پڑی۔ایف آئی سی کے ایم ایس ڈاکٹر رائے ذوالفقارکے مطابق سال2017کے دوران 16512دل کے مریضوں کاایمرجنسی پر داخلہ کرکے علاج کیا گیاجبکہ 96ہزارمریضوں نے ایمرجنسی آؤٹ ڈور سے رجوع کیا۔اکاون ہزار145کی ایکو کارڈیوگرافی کی گئی۔ نیوکلئیرکارڈیالوجی ڈیپارٹمنٹ سے977مریضوں نے استفادہ کیا جبکہ سات ہزار67مریضوں کی انجیوگرافی اور1638کی انجیو پلاسٹی کی گئی۔

Related posts