انڈیپنڈنٹ یونیورسٹی (انڈیپنڈنٹ میڈیکل کالج) فیصل آباد غیرقانونی قرار


فیصل آباد(احمد یٰسین) انڈی پنڈنٹ یونیورسٹی فیصل آباد( انڈیپنڈنٹ میڈیکل کالج فیصل آباد) کو غیرقانونی قرار دیدیا گیاہے۔اور ملک بھر کے طلبہ کو وارننگ جاری کی گئی ہے کہ اس میں داخلہ نہ لیں۔انڈیپنڈنٹ یونیورسٹی(انڈیپنڈنٹ میڈیکل کالج ) فیصل آباد سے ڈگری حاصل کرنے والوں کی تصدیق ہائیرایجوکیشن کمیشن سے نہیں ہو سکے گی۔نیوزلائن کے مطابق انڈیپنڈنٹ یونیورسٹی فیصل آباد کو ہائیرایجوکیشن کمیشن نے غیرقانونی اور نامنظور شدہ یونیورسٹیوں‘ تعلیمی اداروں کی لسٹ میں شامل کرلیا ہے۔ انڈیپنڈنٹ یونیورسٹی (انڈیپنڈنٹ میڈیکل کالج) فیصل آباد کا نام ائیرایجوکیشن کمیشن کی غیرقانونی ‘ نامنظور شدہ تعلیمی اداروں کی لسٹ میں 103واں نمبر ہے۔ جس میں یونیورسٹی و کالج کے اولڈ کیمپس کا ایڈریس 175جناح کالونی فیصل آباد بھی درج کیا گیا ہے اور واضح کردیا گیا ہے کہ یہ ہی وہ ادارہ ہے جو طلبہ کا تعلیمی استحصال کر رہا ہے۔انڈیپنڈنٹ میڈکل کالج کے حوالے سے سامنے آیا ہے کہ وہ اٹھارہ سال قبل بنا تھا اس کی ڈگری کے حوالے سے پہلے بھی کئی مرتبہ سامنے آچکا ہے کہ ایچ ای سی اس کی ڈگری کی تصدیق نہیں کرتا ۔ کالج انتظامیہ کے خلاف اس حوالے سے کئی مرتبہ احتجاج بھی ہوچکے ہیں ۔درمیان میں کچھ عرصہ کیلئے اس حوالے سے خاموشی رہی مگر اب ہائیرایجوکیشن کمیشن نے ایک مرتبہ پھر انڈی پنڈنٹ یونیورسٹی (انڈیپنڈنٹ میڈیکل کالج) فیصل آباد کو غیرقانونی قرار دیدیاہے اور طلباء اور والدین کے نام وارننگ نوٹس جاری کرکے انہیں اس ادارے میں داخلہ لینے سے سختی سے روکا گیا ہے۔انڈیپنڈنٹ میڈکل کالج کے چیئرمین فیصل آباد کے معروف معالج ڈاکٹر محمد شجاع طاہر اور پرنسپل ڈاکٹر محمد یوسف شاہ بتائے جاتے ہیں۔

 

Related posts