ٹیکس چوری‘ فراڈ:فاروق خاں کا سینٹ ٹکٹ مریم نواز نے رکوا دیا


فیصل آباد(نیوزلائن)مسلم لیگ ن کی رہنما مریم نواز نے فیصل آباد سے ن لیگ کے رہنما اور پیپسی کولا فیصل آباد کے چیف ایگزیکٹو فاروق خاں کا پارٹی ٹکٹ رکوا دیا۔ جس کی وجہ فاروق خاں کے ٹیکس چوری اور فراڈ و دھوکہ دہی سے بنک سے غیرقانونی قرضہ لینا بتایا جاتا ہے۔ نیوزلائن کے مطابق مسلم لیگ نے کے رہنما فاروق خاں سینٹ الیکشن میں امیدوار بننا چاہتے تھے۔ اس کیلئے وہ کافی عرصہ سے لابنگ کر رہے تھے ۔ انہوں نے سینٹ الیکشن کیلئے کاغذات نامزدگی بھی حاصل کرلئے تھے اور پارٹی ٹکٹ کیلئے مسلم لیگ ن کی قیادت کو باضابطہ درخواست بھی دیدی تھی۔ میاں نواز شریف پرانے تعلقات کی بناء پر فاروق خاں کو سینٹ کا ٹکٹ دینا بھی چاہتے تھے۔ ان کا نام فائنل امیدواروں میں لیا جا رہا تھا مگر عین آخری لمحات میں مریم نواز نے فارق خاں کا ٹکٹ رکوا دیا اور دیگر نام فائنل کروا لئے۔ذرائع کے مطابق مریم نواز نے میاں نواز شریف سے اصرار کرکے فاروق خاں کا ٹکٹ رکوایا اور ان کی جگہ دوسرے نام کو فائنل کروایا۔ فاروق خاں آخری لمحات تک کوشش کرتے رہے کہ انہیں پارٹی کنفرم کردے تو وہ کاغذات جمع کروائیں۔ ان کے کاغذات الیاس انصاری اور راؤ کاشف رحیم نے تصدیق و تائید کئے تھے ۔ کاغذات تیار تھے مگر پارٹی کے امیدوار فائنل کرنے پر انہیں کاغذات جمع کروانے کی مہلت نہ ملی۔ ذرائع کے مطابق مریم نواز نے ٹیکس چوری‘ بنک فراڈ جیسے معاملات میں فاروق خاں کا نام آنے اور ان کی وجہ سے پارٹی کی بدنامی ہونے سے نالاں ہیں۔ فاروق خاں کا ٹکٹ کینسل کروانے میں فیصل آباد سے تعلق رکھنے والے بعض وزراء کا ہاتھ بھی بتایا جاتا ہے۔ ذرائع کے مطابق فاروق خاں کا ٹکٹ مریم نواز سے کنفرم کروانے کیلئے طلال چوہدری بھی کافی سرگرم رہے مگر مریم نواز نے انہیں بھی فاروق خاں کے اندرون خانہ معاملات بارے تفصیل سنا کر خاموش کروا دیا ۔

Related posts