وزیر قانون رانا ثناء اللہ کی گاڑی نان کسٹم پیڈنکلی


فیصل آباد(احمد یٰسین)مسلم لیگ ن کے رہنما اور پنجاب کے طاقتورترین وزیررانا ثناء اللہ خاں کے نان کسٹم پیڈ گاڑی استعمال کئے جانے کی رپورٹ سامنے آئی ہے۔وزیر قانون کو یہ گاڑی مسلم لیگ ن کے ہی ایک ایم پی اے کی طرف سے تحفے میں دی گئی اور وزیر قانون اس پر ملک بھر میں سفر کرتے رہے ہیں۔ کئی سالوں سے مسلسل نان کسٹم پیڈ گاڑی استعمال کرنے سے خود رانا ثناء اللہ کے علاوہ محکمہ کسٹم ‘ پولیس‘ ٹریفک وارڈنز ‘ پنجاب سیف سٹی اتھارٹی اور دیگر صوبائی اور وفاقی اداروں کی اعلیٰ کارکردگی بھی روز روشن کی طرح عیاں ہو گئی ہے۔نیوزلائن کے مطابق ایک رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ وزیر قانون پنجاب رانا ثناء اللہ خاں خود ہی قانون سے کھلواڑ کرنے میں ملوث ہیں۔ رانا ثناء اللہ خاں نا ن کسٹم پیڈ اور محکمہ ایکسائز میں نان رجسٹرڈ گاڑی لے کر ملک بھر میں گھومتے رہے ہیں۔ یہ ’’ پجارو ‘‘ رانا ثناء اللہ کئی سالوں سے استعمال کررہے ہیں۔ یہ گاڑی رانا ثناء اللہ کو مسلم لیگ ن کے ہی ایک ایم پی اے نے تحفے میں دی تھی۔ ایم پی اے نے اتنا قیمتی تحفی کیوں دیا اور اس کے عوض رانا ثناء اللہ خاں سے کیا کام لیا اس بارے میں تفصیلات سامنے نہیں آسکیں۔ رانا ثناء اللہ خاں کے زیر استعمال گاڑی نان کسٹم پیڈ اور ایکسائز میں نان رجسٹرڈ ہونے کا انکشاف ایک مقامی جریدے کی خصوصی رپورٹ میں کیا گیاہے جبکہ رانا ثناء اللہ خاں یا انکے ترجمان کی طرف سے اس کی تردید بھی نہیں کی گئی۔ذرائع کے مطابق رانا ثناء خاں اس نان کسٹم پیڈ گاڑی پر ملک کے مختلف حصوں کا سفر کرتے رہے ہیں۔ فیصل آباد اور لاہور کا سفر کرتے رہے ہیں۔ گاڑی کے نان کسٹم پیڈ اور ایکسائز میں نان رجسٹرڈ ہونے کے باوجود کسی قانون نافذ کرنیوالے ادارے نے ان سے پوچھ گچھ کی اور نہ سکیورٹی اداروں نے ہی اس کا نوتس لیا۔ نان رجسٹرڈ گاڑی لاہور کی سڑکوں پر پھرتی رہی اور پنجاب سیف سٹی اتھارٹی بھی اس کو چیک نہ کرسکی۔رانا ثناء اللہ خاں کے نان کسٹم پیڈ گاڑی استعمال کرنے پر اداروں کی ’’اعلیٰ‘‘ کارکردگی تو سامنے آئی ہی ہے جبکہ خود قانون کے تحفظ کا حلف اٹھانے والے قانون کے وزیر کا قانون کا احترام کرنے کا ثبوت بھی سب کے سامنے آگیا ہے۔

Related posts