فیصل آباد ویسٹ مینجمنٹ کمپنی میں لاکھوں روپے کے گھپلے


فیصل آباد(ندیم جاوید)فیصل آباد ویسٹ مینجمنٹ کمپنی میں گاڑیوں کی مرمت و پٹرول کے استعمال میں لاکھوں روپے کے گھپلوں کی رپورٹ سامنے آئی ہے۔ انٹرنل آڈٹ کے دوران ایف ڈبلیو ایم سی کے حکام 23ملین روپے سے زائد کا حساب نہ دے سکے۔ چیئرمین کمپنی نے بھی معاملے کا نوٹس لیا مگر بعد ازاں اندر کھاتے ہی معاملہ ٹھپ کردیا گیا۔نیوزلائن کے مطابق فیصل آباد ویسٹ مینجمنٹ کمپنی میں پٹرول کا استعمال میں بڑے پیمانے پر بے قاعدگیاں سامنے آئی ہیں۔ پٹرولیم مصنوعات براہ راست پی ایس اوسے خریدی گئیں اور ان کی ادائیگی بھی کم نرخوں پر کی گئی مگر کمپنی کے کاغذات میں زائد نرخ ظاہر کرکے لاکھوں روپے کا ہیر پھیرکیا گیا۔کمپنی کی گاڑیوں کی مرمت پر ایک سال میں پونے تین کروڑ روپے اڑا دئیے گئے۔ 45لاکھ سے زائد کا کمپنی کے پاس حساب ہی نہیں ہے۔ذرائع کے مطابق 23ملین سے زائد کی بے ضابطگیاں اور کرپشن سامنے آچکی ہے جبکہ مزید انکشافات ہونے کا امکان ہے۔ کرپشن سامنے آنے پر چیئرمین فیصل آباد ویسٹ مینجمنٹ کمپنی و میئر رزاق ملک نے اس معاملے کا نوٹس لیا اور ایم ڈی عماد گل سے جواب طلبی کی مگر بعد ازاں اندر کھاتے ہی معاملہ دبا دیاگیا۔ اس حوالے سے ڈائریکٹر فنانس ایف ڈبلیو ایم سی احسن سے پوچھا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ ہمارے پاس تمام ثبوت موجود ہیں۔ انٹرنل آڈٹ میں اگر کچھ ثابت نہیں بھی ہوا تو ہم ایکسٹرنل آڈٹ میں سب ٹھیک کر لیں گے

Related posts

Leave a Comment