رانا ثناء اللہ کی سیاست: مریم نواز سے محترمہ مریم نواز تک

ملک سے مشرف کا اقتدار ختم ہونے کا سب سے زیادہ فائدہ میاں شہباز شریف کو ہوا۔ ملک کے ساٹھ فیصد حصے پر بلاشرکت غیرے میاں شہباز شریف دس سال تک برسراقتدار رہے۔ کوئی ان کے مقابل نہیں تھا۔ کوئی ان کیلئے اس عرصے میں چیلنج نہیں تھا۔ ان کا سگا بھائی میاں نواز شریف بھی نہیں۔ دونوں بھائیوں میں بہت پہلے خاموش مفاہمت ہوچکی تھی کہ پنجاب شہباز شریف کے حوالے اور مرکز کی سیاست نواز شریف کریں گے۔ اپوزیشن نام کی کوئی چیز پنجاب میں تھی ہی کہاں۔…

Read More

بھٹو کو مقدمہ قتل میں قادیانیوں نے پھنسایا: جرم تحفظ ختم نبوت تھا

بھٹو صاحب نے جب قادیانیوں کو غیرمسلم قرار دینے والے مسودے پر دستخط کیے اس وقت چیف آف نیول اسٹاف حسن حفیظ احمد قادیانی تھا، آرمی کا ڈپٹی چیف عبدالعلی قادیانی تھا اور فضائیہ کا سربراہ ظفر چوہدری بھی قادیانی تھا۔ ظفر چوہدری نے ہی اپنے ہم زلف میجر جنرل نذیر کے ساتھ مل کر بھٹو کے قتل کی سازش بھی کی تھی۔ ظفر چوہدری کی دیدہ دلیری کا عالم یہ تھا کہ ربوہ میں مرزا ناصر قادیانی کے جلسے پر فضائیہ کے جہاز بھیج کر گل پاشی کی اور…

Read More

صحافت کے شعبے سے صحافت کا دیس نکالا۔ تحریر: نواز طاہر

سچ کو سچ ماننا بھی اتنا ہی لازم ہے جتنا جھوٹ کو ڈنکے کی چوٹ پر جھوٹ کہنا ضروری ہے ، پیشہ ورانہ زندگی میں کسی کو سینئر تسلیم کرنا مشکل کام ہے خاص طور پر جب سے صحافت میں پیدائشی استادوں اور پیراشوٹر اینکرز حملہ آور ہوئے ہیں ، سینئر جونیئر کا تصور ہی ختم ہوگیا ہے ، سو مجھے حامد میر سے ”بغض‘ ہے کہ وہ مجھ سے سینئر ( ایک ڈیڑھ سال) ہیں ( اس میں مقبولیت کو شامل کرکے توہین کا پہلو نکا نکالنے کی کوشش…

Read More

میڈیا بحران ، سازشیں اور حقائق ۔۔۔تحریر نواز طاہر۔

گلوبل پِنڈ ( محمد نواز طاہر) معروف خیبر میل ایکسپریس کو پاکستان ریلویز کی مین لائن کی پہلی ٹرین کا اعزاز حاصل ہے ۔ ریلوے ریکارڈ میں اس کا نمبر ون اپ اور ٹو ڈاﺅن ہے ،درہ خیبر سے منسوب یہ ٹرین پشاور سے کراچی تک بتیس سٹاپ کرتے ہوئے سترہ سو اکیس کلومیٹر کا سفر کم و بیش بتیس گھنٹوں میں طے کرکے منزل پر پہنچتی ہے ۔ کبھی اس ٹرین کو تیز رفتار گاڑی قراردیا جاتا تھا ، وقت گذرنے پر اسے بہت سے لوگ ’کچھوا‘ کہنے لگے…

Read More

کبوتروں کی بند آنکھیں،بلی کے پنجے اور دانت گردن پر

برِ صغیر میں، بنیادی حقوق ، جمہوریت ، ٹریڈ یونین اور آزادی اظہارِ رائے کی جدوجہد کی تاریخ میں پنجاب یونین آف جرنلسٹس( پی یو جے) اور قیام پاکستان کے بعدکی تاریخ پاکستان فیڈرل یونین آف جرنلسٹس( پی ایف یو جے) کے ذکر کے بغیر نامکمل اور پھیکا ہوگی ۔ پی یو جے عمر میں پاکستان سے پانچ سال بڑی جبکہ پی ایف یو جے دو سال چھوٹی ہے ، اس تنظیم میں کچھ اراکین ایسے بھی ہیں جو اگرچہ متحرک کارکن نہیں لیکن رکن رہیں ہیں اور ان دنوںمیڈیا…

Read More

پنجاب اسمبلی کے اراکین کی تنخواہوں میں اضافے پر ہنگامہ کیوں ؟

پنجاب اسمبلی کے اراکین کی تنخواہوں میں اضافہ ہوگیا ہے ۔ کیا یہ کوئی انوکھی یا انہونی بات ہے ؟ جسے انہونی یا عجیب لگتی ہے وہ صرف ایک بار یہ جائزہ تو لے کہ پنجاب اسمبلی کے اراکین کی تنخواہ دوسری صوبائی اسمبلیوں کے اراکین کے مساوی یا ان سے زائد ہے ؟ممکن ہے اب زیادہ ہوگئی ہو لیکن پنجاب اسمبلی کے اراکین کے موقف ہے یہ تنخواہ دیگر اسمبلیوں کے اراکین سے زائد ہرگز نہیں ہے ۔ پنجاب اسمبلی کے اراکین کا تنخواہوں میں اضافے کا مطالبہ نیا…

Read More

نوائے وقت کی مالکہ رمیزہ کے ظالمانہ روئیے پر آنسو روتی تحریر

دل کے زخم مندمل نہیں ہوتے۔۔ نوائے وقت اخبار میں چھ ماہ سے تنخواہوں کی عدم ادائیگی، مستقل ملازمین کو قبل از وقت ریٹائر کرنے اور ڈیلی ویجز پر دوبارہ ملازمت دینے کے خلاف مظاہرہ جاری تھا۔ پرویز شوکت صاحب بولے کہ جن کے لیے ہم مظاہرہ کر رہے ہیں وہ یہاں موجود نہیں ہیں۔ اچانک مجمع میں سے ایک ادھیڑ عمر کا شخص سامنے آیا اور بولا میں یہاں موجود ہوں، میں وہ ہوں جس نے اپنی زندگی اس اخبار کو دے دی، جوانی سے بڑھاپے میں پہنچ گیا…

Read More

ماں کی گود بچے کی پہلی درس گاہ : تحریر ۔ رائو شکیل

آج 8 مارچ 2019ء کو 110واں عالمی یوم خواتین منایاجا رہا ہے۔ خواتین کے حقوق کا پہلا عالمی دن 28 فروری 1909ء کو امریکہ میں منایا گیا تھا۔ اس دن کی بنیاد اس وقت رکھی گئی جب امریکہ کے شہر نیو یارک میں ٹیکسٹائل کے شعبے میں کام کرنے والی خواتین نے طویل اوقات کار اور کم تنخواہوں پر احتجاج کیا ان کا مطالبہ یہ تھا کہ ان کی ڈیوٹی آٹھ گھنٹے کی جائے اور معقول تنخواہ دی جائے۔ یہ احتجاج جاری رہے لیکن قابل ذکر احتجاج 1908ء میں کیا…

Read More

خواتین کے حقوق کی بحالی‘معاشرے کے ہر فرد کی ذمہ داری: تحریر ۔ ثوبیہ شاہ

جہالت ایک ایسی دلدل ہے جو بھی اس میں پھنس گیا وہ تباہ کاریوں سے کبھی نہیں بچ سکاجن معاشروں میں علم کا فقدان ہے وہ معاشرہ کبھی ترقی کی جانب گامزن نہیں ہو سکتا ۔قوموں کی تقدیر کا دارومدار تعلیم کے فروغ میں ہی مضمر ہے۔ اگر آج بھی خواتین معاشرتی ناہمواریوں کی بھینٹ چڑھتی رہیں تو پھر ترقی کا خواب کبھی پورا نہیں ہو سکتا ہے یہ حقیقت ہے کہ عورت اور مرد گاڑی کے دو پہیے ہیں۔ ضرورت اس امر ہے کہ حکومت کے علاوہ معاشرے کا…

Read More

لاکھانی ایسا تو نہیں تھا۔۔۔ تحریر: شہریار خان

تین چار ماہ کی بے روزگاری کے بعد لاہور کے ایک ٹی وی چینل کے لیے بطور بیورو چیف کام شروع کیا، ماحول ایسا تھا سوچتا تھا کب یہاں سے نوکری چھوڑنی پڑ جائے کیونکہ ادارہ کو خبر سے غرض نہیں تھی۔ایسے میں ایکسپریس نیوز سے کال آئی کہ آپ کب جائن کریں گے۔ میں تو امید ہی چھوڑ چکا تھا کیونکہ ہمارے دوست ثاقب راجہ نے جو انٹرویو کروایا تھا وہ دیئے چار ماہ گزر چکے تھے۔ بہرحال فوری طور پر جانے کے بجائے میں نے ایک ہفتہ کا…

Read More