جی سی ویمن یونیورسٹی فیصل آباد: ڈاکٹر خانزادی کو 20 جون تک کی مہلت

فیصل آباد ( احمد یٰسین) جی سی ویمن یونیورسٹی فیصل آباد کی وائس چانسلر شپ سنبھالنے کیلئے ڈاکٹر خان زادی کو 20 جون تک کی مہلت دیدی گئی ہے۔ اس مدت میں چارج نہ سنبھالنے پر ان کا بطور وائس چانسلر نوٹیفکیشن منسوخ اور ان کی جگہ کسی دوسری امیدوار کو وائس چانسلر بنائے جانے کی سمری تیار کرنے کی متعلقہ حکام کو ہدائت کردی گئی ہے۔نیوز لائن کے مطابق جی سی ویمن یونیورسٹی فیصل آباد کی وائس چانسلر کا عہدہ گزشتہ پونے دو ماہ سے خالی ہے۔ 19اپریل کو قائمقام وائس چانسلر کو سبکدوش کیا گیا ۔ بعد ازاں ڈاکٹر فاطمہ خان زادی کو چار سال کیلئے وائس چانسلر بنائے جانے کا نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا مگر تاحال ڈاکٹر خان زادی نے اس عہدے کا چارج نہیں سنبھالا۔ اس حوالے سے یہ رپورٹس بھی سامنے آتی رہیں کہ ڈاکٹر خان زادی یہ عہدہ سنبھالنے کی خواہاں نہیں ہیں۔ اور کسی دوسری جگہ جانے کی کوشش میں ہیں۔تاہم نیوزلائن سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر فاطمہ خان زادی نے اس کی تردید کی اور کہا کہ جی سی ویمن یونیورسٹی کی وائس چانسلر شپ ان کیلئے اعزاز ہے۔ وہ صوابی یونیورسٹی میں اپنی مدت پوری ہونے پر فیصل آباد میں چارج لیں گی۔ اب اس حوالے سے یہ سامنے آیا ہے کہ وزیر ہائیر ایجوکیشن پنجاب نے ڈاکٹر خان زادی کو 20 جون تک جی سی ویمن یونیورسٹی فیصل آباد میں چارج سنبھالنے کی مہلت دی ہے۔ عید کی چھٹیوں کے بعد ایک ہفتے میں انہیں چارج سنبھالنے کا کہا گیا ہے۔ اس مدت میں ڈاکٹر خان زادی کے چارج نہ سنبھالنے کی صورت میں ان کی تعیناتی کا نوٹیفکیشن معطل کرنے اور ان کے بعد والے تین ناموں میں سے کسی شخصیت کو وائس چانسلر لگائے جانے کی سمری ہائیر ایجوکیشن کی طرف سے وزیر اعلیٰ پنجاب کو بھجوا دی جائے گی۔ واضح رہے کہ وائس چانسلر کا عہدہ خالی ہونے کی وجہ سے جی سی ویمن یونیورسٹی فیصل آباد شدید انتظامی و مالی بحران کا شکار ہے۔ فیکلٹی اور نان فیکلٹی سٹاف کی تنخواہیں عید پر بھی نہیں دی جا سکیں۔ یونیورسٹی میں بد انتظامی عروج پر ہے۔ متعدد سٹاف ممبران کے کنٹریکٹ کی تجدید نہیں ہو سکی۔ اور دیگر مختلف قسم کے معاملات زیرالتواپڑے ہیں۔

Related posts