جی سی یونیورسٹی فیصل آبادکے مزید تین شعبہ جات کے انچارج تبدیل

فیصل آباد (نیوز لائن) جی سی یونیورسٹی فیصل آباد کے وائس چانسلر پرفیسر ڈاکٹر شاہد کمال نے جامعہ کے تین شعبہ جات کے انچارج تبدیل کردئیے ہیں۔ نیوز لائن کے مطابق وی سی نے پنجابی ڈیپارٹمنٹ کی انچارج اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر اسماءغلام رسول کو انکے عہدے سے ہٹا دیا ہے اور ڈین علوم شرقیہ و اسلامک پروفیسر ڈاکٹر آصف اعوان کو پنجابی ڈیپارٹمنٹ کے انتظامی و تدریسی معاملات کی دیکھ بھال کی ذمہ داری سونپی ہے۔ ڈیپارٹمنٹ آف پولیٹیکل سائنس کے انچارج اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر غلام مصطفی کو انکے عہدے سے ہٹا کر اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر علی شان شاہ کو ڈیپارٹمنٹ کا انچارج مقرر کیا گیا ہے۔ حال ہی میں پروفیسر بننے والی پروفیسر ڈاکٹر زہریٰ بتول کو ڈیپارٹمنٹ آف سوشیالوجی کی چیئرپرسن شپ سے ہٹا کر ایسوسی ایٹ پروفیسر ڈاکٹر محمد فاروق کو شعبہ سوشیالوجی کا چیئرمین مقرر کیا گیا ہے۔ یونیورسٹی کے رجسٹرار آفس نے تینوں نئی تعیناتیوں کا نوٹیفکیشن جاری کردیا ہے ۔ڈاکٹر آصف اعوان‘ ڈاکٹر محمد فاروق اور ڈاکٹر علی شان شاہ نے نئی ذمہ داریوں کا چارج بھی سنبھال لیا ہے۔

وائس چانسلر نے چند ہفتے قبل بھی چند شعبہ جات کے انچارج تبدیل کئے تھے۔ چند ہفتے قبل وی سی نے ڈاکٹر اشرف اقبال کو ماس کمیونیکیشن‘ ڈاکٹر فرحانہ نوشین کو ہوم اکنامکس‘ ڈاکٹر عامر محمود کو بائیو ٹیکنالوجی‘ ڈاکٹر عامر منج کو کالج آف لاء کا انچارج اور ڈاکٹر کلیم کھوسہ کو ڈین فیکلٹی آف انجنیئرنگ مقرر کیا تھا۔اس موقع پر پروفیسر ڈاکٹر زہریٰ بتول کو ہٹا کر ایسوسی ایٹ پروفیسر ڈاکٹر محمد فاروق کو چیئرمین ڈیپارٹمنٹ آف سوشیالوجی لگایا گیا تھا تاہم چند گھنٹے بعد ہی وائس چانسلر نے ڈاکٹر زہریٰ بتول کو ہٹانے کا نوٹیفکیشن اس بناء پر واپس لے لیا۔کہ ڈاکٹر زہریٰ بتول پروفیسر ہیں اور ان کو ہٹا کر ایک ایسوسی ایٹ کو لگانا انہوں نے مناسب نہیں سمجھا تھا۔

بعد ازاں وائس چانسلر نے سنڈیکیٹ کے ذریعے یونیورسٹی کی الحاق کمیٹی کے چیئرمین ڈاکٹر ناصر امین اور سیکرٹری آصف لطیف کو ان کی ذمہ داریوں سے سبکدوش کردیا اور ان کی جگہ ڈین سوشل سائنسز پروفیسر ڈاکٹر عاصم محمود پر اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے انہیں الحاق کمیٹی کا چیئرمین منتخب کروایا۔ جبکہ پروفیسر ڈاکٹر مظہر حیات‘ ذیشان احمد خان اورڈاکٹر ہدائت رسول کو الحاق کمیٹی کا نیا ممبر بھی بنایا گیا۔ نیوز لائن کے مطابق آئندہ چند دنوں میں یونیورسٹی کے متعدد دیگر شعبہ جات کے انچارجوں و چیئرمینوں کی تبدیلی متوقع ہے۔ یونیورسٹی ذرائع کے مطابق یونیورسٹی کے تمام ایسے چیئرمین تبدیل کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا ہے جو تین سال سے اپنے عہدے پر براجمان ہیں اور ان کے شعبہ میں چیئرمین کے علاوہ بھی پروفیسر اور ایسوسی ایٹ پروفیسر موجود ہیں جبکہ تمام ایسے شعبہ جات جہاں پروفیسر اور ایسوسی ایٹ پروفیسر موجود نہیں ہیں وہاں سینئر فیکلٹی کی نئی بھرتی کرکے چیئرمین بنائے جانے کا اصولی فیصلہ کیا گیا ہے۔

Related posts