فلاحی سرگرمیوں کو منظم بنانے کیلئے جدید علوم ناگزیر ہیں: رانا شاہد


فیصل آباد(نیوزلائن)ڈائریکٹر سوشل ویلفےئر محمد شاہد رانا نے کہا ہے کہ فلاحی سرگرمیوں کو منظم اور جامع بنانے کے سلسلے میں جدید علوم اور مہارتوں سے آگاہی ناگزیر ہے اس ضمن میں تربیتی پروگرامز کی اہمیت سے انکار نہیں کیا جاسکتا جس کی بدولت استعداد کار میں اضافہ اور عوامی فلاح وبہبود سے متعلق حکومتی اقدامات کے بہتر نتائج حاصل کئے جاسکتے ہیں۔انہوں نے یہ بات سوشل ویلفےئر کمپلیکس پیپلز کالونی کے کپیسٹی بلڈنگ وٹریننگ سنٹر میں ’’کمیونٹی موبلائزیشن اینڈاین جی اومینجمنٹ‘‘کے موضوع پر ایک روزہ تربیتی ورکشاپ کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ڈپٹی ڈائریکٹرز خالد بشیر،فرخ رضوان،محمد زاہد،انچارج قصر بہبود خالدہ رفیق،سوشل ویلفےئر آفیسرز صوفیہ رضوان،معافیہ خان،محمد طاہر،کاشف نثار،نفر اقبال،ناصر چدھڑ،محمد ناصر اعوان ودیگر کے علاوہ این جی اوز کے نمائندے مسز سلیم الحسن،طلعت ناہید،حافظ نزاکت اللہ شاہ،سید ظفر عباس ودیگر موجود تھے۔ڈائریکٹر سوشل ویلفےئر نے کہا کہ سماجی ترقی اور عوامی فلاح وبہبود کے سلسلے میں این جی اوز کے شاندار کردار کو نظر انداز نہیں کیا جاسکتا جن کے زیر انتظام فلاحی ادارے تعلیم وصحت،پیشہ وارانہ فنون کی تربیت اور دیگر سماجی شعبوں میں حکومت کا ہاتھ بٹا رہے ہیں لہذا ان کی سرپرستی اور حوصلہ افزائی کے ساتھ فلاحی سرگرمیوں کے فروغ اور بہترین نتائج کے حصول کے لئے انہیں جدید انتظامی وفنی مہارت بھی فراہم کی جارہی ہے اور ایک روزہ تربیتی ورکشاپ کاانعقادانہی اقدامات کا حصہ ہے۔انہوں نے ورکشاپ میں افسران اور این جی اوز کی بھرپور شرکت کو سراہا اور کہا کہ ٹریننگ پروگرامز کا سلسلہ آئندہ بھی جاری رہے گا۔انہوں نے کہا کہ نئے رحجانات کے مطابق محکمانہ اصلاحات اوراقدامات کے لئے عوامی فلاح کے منصوبوں میں کمیونٹی کی زیادہ سے زیادہ شمولیت کو بھی یقین بنائیں گے۔ایک روزہ تربیتی ورکشاپ کے سیشنزمیں شرکاء کو ٹریننگ کے اغراض ومقاصد،کمیونٹی ریسورس موبلائزیشن،این جی او مینجمنٹ اینڈ ریکارڈ کیپنگ ودیگر اقدامات سے آگاہ کیا گیا۔ورکشاپ کے اختتام پر سوشل ویلفےئر افسران اور این جی اوز کے نمائندوں میں سر ٹیفکیٹس بھی تقسیم کئے گئے۔

Related posts