حکومتی رکن اسمبلی کا قریبی عزیز کلاشنکوف سمیت گرفتار: بغیر کارروائی رہا

فیصل آباد (نیوز لائن) پاکستان تحریک انصاف کے رکن پنجاب اسمبلی کا قریبی عزیز ہونے کے دعویدار نے معمولی تلخ کلامی پر شہر کی معروف ایجوکیشن اکیڈمی کے سامنے کلاشنکوف لہرا شہریوں کو شدید خوف میں مبتلا کردیا۔ ریسکیو 15پر کال کے بعد کلاشنکوف بردار نوجوان کو تھانہ گلبرگ پولیس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے گرفتار کرلیا لیکن حکومتی رکن اسمبلی کے ساتھ قریبی عزیز داری سامنے آنے پر کلاشنکوف بردار نوجوان کو بغیر کسی کارروائی کے ہی رہا کرتے بنی۔فیصل آباد پولیس کے ترجمان تھانے میں موجود ہونے کے باوجود کلاشنکوف بردار نوجوان کی گرفتاری اور حکومتی رکن اسمبلی کی سفارش کے سامنے پولیس کی بے بسی کا مظاہرہ خاموشی سے دیکھتے رہے۔ نیوز لائن کے مطابق تھانہ گلبرگ کے علاقے میں لیاقت روڈ پر ڈسٹرکٹ پولیس لائن کے عین سامنے اور سلطان لیبارٹری کے عقب میں واقع ایک ایجوکیشن اکیڈمی کی پارکنگ میں گاڑی پارک کرنے کے معاملے پر مشتعل ہو کر ایک کاربردار نوجوان نے کلاشنکوف نکال لی اور گن لہرا کو لوگوں اور طلباءو طالبات کو شدید ہراساں کرتا رہا۔ کلاشنکوف بردار نوجوان کے خوف و ہراس پھیلانے کے دوران ہی شہری نے ریسکیو 15پر کال کر پولیس کو آگاہ کردیا۔ تھانہ گلبرگ پولیس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے گن بردار نوجوان کو گرفتار کرلیا ۔ پولیس نوجوان کو گرفتار کرکے کلاشنکوف سمیت تھانے بھی لے آئی مگرسابق وزیر قانون کے حلقے سے کامیاب ہونے والے حکومتی رکن اسمبلی کے ساتھ عزیز داری ہونے کی وجہ سے گن بردار نوجوان کے سامنے پولیس کی تمام پھرتیاں اور تھانہ گلبرگ کے سٹیشن ہاو¿س آفیسر کے اختیارات بیکار ثابت ہوئے۔ تھانے میں کسی کام سے موجود فیصل آباد پولیس کے ترجمان بھی گن بردار نوجوان کی اعلیٰ حکومتی حلقوں تک پہنچ کے سامنے تھانہ گلبرگ کے سٹیشن ہاو¿س آفیسر کی قانون پسندی کی بے بسی کا مظاہرہ خاموشی سے دیکھتے رہے۔چند منٹوں میں ہی نوجوان بغیر قانونی کارروائی کے رہا اور اس کی کلاشنکوف واپس اس کے حوالے کی جاچکی تھی۔ اور پولیس افسران نے کلاشنکوف کے ذریعے شہریوں اور ایجوکیشن اکیڈمی کے طلباءو طالبات کو دھمکانے و ڈرانے کا قصور معاف کرتے ہوئے عزت و احترام کیساتھ تھانے سے روانہ کردیا۔

Related posts