مزدوروں نے سرمایہ داروں سے خوفزدہ ڈائریکٹر لیبر کو پہننے کیلئے چوڑیاں دیدیں

فیصل آباد (احمد یٰسین) بھٹہ مزدوروں نے صنعتکاروں سے خوفزدہ ہو کر محنت کشوں کے حقوق کا تحفظ کرنے کی ذمہ داری نبھانے سے احتراز کرنے والے ڈائریکٹر لیبر فیصل آباد ملک منور اعوان کو پہننے کیلئے چوڑیاں دیدیں۔ ڈائریکٹر لیبر کے آفس کے باہر احتجاج کرنیوالے مزدور جب ڈائریکٹر لیبر کے آفس پہنچے تو محنت کش خواتین نے اپنی چوڑیاں اتار کر ڈائریکٹر لیبر کو پیش کردیں۔ اس موقع پر محنت کشوں کا کہنا تھا کہ ڈائریکٹر لیبر رانا منور صنعتکاروں اور بھٹہ مالکان سے خوفزدہ ہیں اور محنت کشوں کے حقوق کا تحفظ کرنے میں مکمل ناکام ہیں۔ لیبر انسپکٹر ‘ لیبر افسران یا دیگر عملہ صنعتکاروں کیخلاف کوئی ایکشن کرتے بھی ہیں تو ڈائریکٹر لیبر ملک منور اعوان انہیں تحفظ فراہم کرنے کیلئے جتن کرتے رہتے ہیں۔ اور لیبر افسران و انسپکٹرز کے اقدامات ناکام بناتے رہتے ہیں۔ صنعتکاروں سے خوفزدہ ڈائریکٹر لیبر ملک منور نے اپنے عرصہ تعیناتی میں بھرپور طریقے سے سرمایہ داروں کے حقوق کا تحفظ کیا ہے جبکہ مزدور دشمن پالیسی اپنائے رکھی ہے۔ ملک منور کے گٹھ جوڑ کی وجہ سے سرمایہ دار ٹولہ مزدوروں پر ظلم ڈھا رہا ہے، اس موقع پر خواتین اور مرد مزدوروں نے چوڑیوں سے ڈائریکٹر لیبر ملک منور کے آفس کی ٹیبل بھر دی اور مطالبہ کرتے رہے کہ ڈائریکٹر لیبر یہ چوڑیاں پہن کر اپنے آفس میں بیٹھا کریں۔ بعد ازاں وہاں کے جونیئر عملے کی مداخلت پر مزدور مذاکرات پر آمادہ ہوئے اور ڈائریکٹر لیبر کی جانب سے ایک ہفتے میں بھٹہ مالکان کیخلاف ایکشن کی یقین دہانی پر مزدور منتشر تو ہوگئے تاہم انہوں نے ڈائریکٹر لیبر کو وارننگ دی کہ کارروائی نہ کرنے کی صورت میں انہیں سرعام چوڑیاں پہنائی جائیں گی۔

Related posts