ایف ڈی اے نے غیرقانونی نجی کالونیوں کو بجلی کنکشن این او سی دیدئیے

فیصل آباد(نیوز لائن)فیصل آباد میں پچاس غیرمنظور شدہ پرائیویٹ ہاؤسنگ کالونیوں کوبجلی کنکشن کیلئے ایف ڈی اے کے این او سی جاری کرنے کا انکشاف ہوا ہے۔ غیرقانونی این او سی کے اجراء میں ایڈیشنل ڈائریکٹر ایف ڈی اے‘ سابق ڈی جی ایف ڈی اے اور دیگر اعلیٰ افسران کے ملوث پائے جارہے ہیں۔ ایف آئی اے نے غیرقانونی این او سی کے اجراء اور ان پر بجلی کنکشن لگائے جانے کی انکوائری شروع کردی ہے۔تفصیل کے مطابق فیصل آباد میں غیرقانونی طور پر اور ایف ڈی اے کی منظوری کے بغیر بننے والی رہائشی کالونیوں میں غیرقانونی بجلی کنکشن لگائے جانے کی رپورٹس سامنے آئی ہیں۔ایف ڈی اے ذرائع کے مطابق پچاس غیرمنظورشدہ رہائشی کالونیوں میں غیرقانونی بجلی کنکشن ایف ڈی اے کے این او سی کی بنیاد پر لگائے گئے ہیں۔ اس معاملے میں ایف ڈی اے کے ایڈیشنل ڈائریکٹر عامر عزیز‘ سابق ڈی جی یاور حسین‘ سابق ایڈیشنل ڈائریکٹر احمد رجوانہ‘ سابق ڈی جی نورالامین اور متعدد دیگر افسران کے ملوث ہونے کی اطلاعات ہیں۔ پچاس غیرمنظورشدہ پرائیویٹ ہاؤسنگ کالونیوں کو بجلی کنکشن لگوانے کیلئے این او سی کا جاری کرنے کے معاملے کے ساتھ کروڑوں روپے کے نذرانے وصول کئے جانے اور قومی خزانے کو اربوں روپے کا نقصان پہنچائے جانے کا معاملہ بھی نتھی ہے۔ ایف آئی اے کی خصوصی ٹیم نے اس معاملے کی تحقیقات شروع کردی ہیں۔ ایف آئی اے کی تحقیقاتی ٹیم میں ڈائریکٹر ایف آئی اے ہیڈ کوارٹر نارتھ زون عبدالرب‘ڈپٹی ڈائریکٹر ایف آئی اے فیصل آباد ربنواز اور اسسٹنٹ ڈائریکٹر میاں صابر شامل ہیں۔ تحقیقاتی ٹیم نے غیرمنظور شدہ رہائشی کالونیوں کو جاری ہونیوالے این او سی اور ان کی فائلیں اور دیگر ریکارڈ قبضہ میں لے لیاہے۔

Related posts