کیس نیب کو بھیجیں یا نااہل کریں، فیصلہ شواہد پر کرینگے، سپریم کورٹ

اسلام آباد(نیوزلائن) سپریم کورٹ میں پاناما عملدرآمد کیس کی سماعت کے دوران جسٹس اعجاز افضل خان نے ریمارکس دیئے کہ جے آئی ٹی نے صرف سفارشات پیش کی ہیں حکم عدالت جاری کرے گی۔ پاناما لیکس کیس کی سماعت جسٹس اعجازافضل کی سربراہی میں جسٹس شیخ عظمت سعید اور جسٹس اعجازالاحسن پرمشتمل سپریم کورٹ کا خصوصی بینچ کررہا ہے۔ وزیراعظم نوازشریف کے وکیل خواجہ حارث نے اپنے دلائل کے دوران سپریم کورٹ کا 20 اپریل کا حکم نامہ پڑھ کرسنایا اور کہا کہ سپریم کورٹ نے اپنے حکم میں تحقیقات…

Read More

کون سے قرض اُتارے ہیں

یہ تاریخ کا جبر نہیں تو پھر کیا ہے؟ پاناما کیس کی تحقیقات کے لئے سپریم کورٹ کی طرف سے بنائی گئی جے آئی ٹی کی رپورٹ نے پاکستان کی سیاست میں وہ آشوب محشر بپا کیا ہے کہ جس میں مسلم لیگ(ن) کی آشفتہ نوائی اس کی مزید رسوائی کا باعث بن رہی ہے۔ وزیر اعظم نواز شریف کو مظلوم ثابت کرنے کے لئے ذوالفقار علی بھٹو سے تشبیہ دی جارہی ہے اور مریم صفدر کو محترمہ بینظیر بھٹو سے ملایا جارہا ہے۔ اس ناچیز کو نواز شریف کی…

Read More

سیاستدانوں کا احتساب ہوتا ہے توججوں اورجرنیلوں کا بھی ہونا چاہئے، جاوید ہاشمی

ملتان(نیوزلائن) سینئر سیاست دان مخدوم جاوید ہاشمی نے کہا ہے کہ صرف سیاست دانوں کا ہی نہیں بلکہ ججوں اور جرنیلوں کا بھی احتساب ہونا چاہیے جب کہ ان کا کہنا تھا کہ ہوسکتا ہے یہ میرے سیاسی کیریئر کی آخری پریس کانفرس ہو۔ ملتان پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے جاوید ہاشمی نے کہا کہ جے آئی ٹی کا تماشا بند کیا جائے، ججوں کو احتیاط سے کام لینا چاہئے، انہوں نے فیصلے سے پہلے ہی حکومت اور نواز شریف کو سسلین مافیا اور گاڈ فادر قرار دے…

Read More

حکومت نظرثانی اپیل نہیں کر سکتی‘ شہباز شریف کو بھی نااہل کروائیں گے

اسلام آباد(نیوزلائن)اگر جے آئی ٹی کی رپورٹ عمران نامہ ہے تو میں اسے کمپلینٹ سمجھتا ہوں، ثابت ہو گیا میں جو کہتا تھا وہی سچ ہے، کپتان کا اظہار مسرت، نواز شریف کے ساتھ ساتھ اسحاق ڈار، شہباز شریف اور ایاز صادق سے بھی مستعفی ہونے کا مطالبہ، کہتے اب حکومت نظرثانی درخواست دائر نہیں کر سکتی، اس کا وقت گزر چکا ہے۔ چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے پارٹی رہنماؤں کے ساتھ مشاورتی اجلاس کے بعد بنی گالہ اسلام آباد میں اپنی رہائشگاہ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے…

Read More

میاں شریف ارب پتی نہیں تھے‘نواز شریف جھوٹے‘ لندن فلیٹ مریم کی ملکیت

اسلام آباد(نیوزلائن)پانامہ گیٹ سکینڈل پر قائم مشترکہ تحقیقاتی ٹیم نے عدالت عظمیٰ میں جمع کروائی جانے والی آخری اور حتمی رپورٹ میں انکشاف کیا ہے کہ لندن فلیٹس 1993سے آج تک شریف خاندان کی ملکیت ہے ،70کی دہائی میں میاں محمد شریف کا ارب پتی ہونا ثابت نہیں ہوتامریم نواز لندن فلیٹس کی حقیقی مالک ہیں ،2000تک حسین نواز اور حسن نواز کا اپنا کوئی ذریعہ آمدن نہیں تھا ،2001میں حسن اور حسین نواز نے اپنا کاروبار شروع کیا رپورٹ میں انکشاف کرتے ہوئے مشترکہ تحقیقاتی ٹیم کا کہنا ہے…

Read More