بالاکوٹ حملے اور ‘سرپرائز ڈے’ کو انڈیا اور پاکستان نے رائے عامہ کی تبدیلی کے لیے کیسے استعمال کیا؟

‘اگر میں پاکستانی افواج کے شعبہ تعلقات عامہ پر بھروسہ کروں جو میں کرتی ہوں تو پاکستان نے انڈیا کے دو طیارے گرائے تھے۔۔۔‘، ’26 فروری 2019 کو انڈیا کے حملے کے نتیجے میں پاکستان میں 300 افراد ہلاک ہوئے تھے۔۔۔۔‘

یہ دعوے، آج سے دو برس قبل انڈین فضائیہ کی جانب سے پاکستان کے شمالی علاقے بالاکوٹ میں شدت پسند تنظیم کے کیمپ کو نشانہ بنانے کے دعوے اور پاکستانی فضائیہ کے طیاروں کی جوابی کارروائی کے بعد پاکستان اور انڈیا کی سرحد کے دونوں اطراف موجود نوجوانوں کے ہیں۔

پاکستان کے شہر راولپنڈی سے تعلق رکھنے والی مہا قیوم کا دعویٰ ہے کہ ’14 فروری 2019 کو ہونے والے پلوامہ حملے کے پیچھے بھی مودی حکومت کا ہاتھ تھا۔‘

جبکہ دوسری جانب انڈیا کے شہر لکھنؤ سے تعلق رکھنے والی رتوجا تیواری کہتی ہیں کہ ’وہ 300 لوگ افسوسناک طور پر مارے گئے لیکن پاکستان نے ایک دہشتگرد حملہ کیا تھا، تو اس کے علاوہ کوئی چارہ نہیں تھا۔‘

Related posts

Leave a Comment